پشاور‘ لاک ڈاؤں میں ٹرانسپورٹ کا نظام معطل‘ ہزاروں بے روزگار

پشاور‘ لاک ڈاؤں میں ٹرانسپورٹ کا نظام معطل‘ ہزاروں بے روزگار

  

پشاور (سٹی رپورٹر)صوبائی دارلحکومت پشاور میں پبلک ٹرانسپورٹ لاک ڈاون کے باعث معطل ہونے کی وجہ سے صوبہ بھر میں ہزاراوں افراد بے روزگار ہو چکے اور عوام کو بھی امد و رفت میں شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑھ رہا ہے تاہم صوبائی حکومت کی جانب سے لاک ڈاون میں ٹرا نسپورٹ پر 15مئی تک توسیع پر ٹرانسپورٹ برادری سے وابستہ افراد مزید تشویش میں مبتلا ہو گئے اور انہوں نے تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے میڈیا کو بتایا کہایک ماہ سے زائد عرصہ گزر چکا ہے اور ہمارے ساتھ جو بھی جمع پونجی تھی وہ خرچ کر چکے ہے جبکہ مزید گزر بسر کرنے کیلئے قرضہ پر مجبور ہو گئے ہیں ۔انہوں نے بتایا کہ گاڑی چلتی تھی تو ہی ہمارا رزق رواں تھا مگر اب کرونا وائرس کے لاک ڈاون سے کاروبار تباہ ہو گیا جبکہ گاڑیاں کھڑے کھڑے خراب ہونے لگی جسکی مرمت پر ہزاروں روپے خرچہ ائے گا جو ہمارے بس کی بات نہ رہی اب کیونکہ لاک ڈاون نے ہمیں بھیک مانگنے پر مجبور کیا ۔انہوں نے بتایا کہ حکومت کی جانب سے ترانسپورٹ برادری کیلئے کوئی واضح اقدامات نہ اٹھانا قابل افسوس ہے اور غریب دشمنی کے مترادف ہے جبکہ ایسے صورت حال میں برے ریلیف پیکجز دینے چاہئے تھے تاکہ ہم اپنے گھر کے چھولہے چلا سکیں

مزید :

پشاورصفحہ آخر -