سپورٹس راؤنڈ اپ

سپورٹس راؤنڈ اپ

  

ٹینس سربراہان کھیل کی واپسی میں جلدی نہ کریں، اینڈی مرے

ٹینس سٹار اینڈی مرے نے زور دیا ہے کہ کورونا وائرس کی وبائی صورتحال کے خاتمے کے بعد کھیل کے میدانوں کو آباد کرنے میں اتنی جلدی نہ دکھائی جائے۔میڈیا رپورٹ کے مطابق مینز پروفیشنل ٹینس اور ویمن ٹینس ایسوسی ایشن کے مقابلوں کو کورونا وائرس کی وجہ سے جولائی تک معطل کیا جا چکا ہے، پریمیر لیگ فٹبال کلب متمنی ہیں کہ ان کے سیزن کو رواں موسم گرما تک مکمل کر لیا جائے۔سابق نمبر ون کھلاڑی اینڈی مرے نے بتایا کہ سفری دشواریوں کے باعث ٹینس وہ آخری سپورٹس ہونا چاہیے جسے کورونا وبا کے خاتمے کے بعد دوبارہ کھیلنے کا سوچا جائے۔اپنے ایک بیان میں اینڈی مرے نے کہا ہے کہ سب سے پہلے ہمیں اپنی نارمل زندگی میں واپس آنے کی ضرورت ہے۔ ہم باہر جائیں، دوستوں سے ملیں، ریسٹورنٹس جائیں اور آزاد فضا میں سانس لے سکیں۔اینڈی مرے نے کہا کہ اس کے بعد امید کی جا سکتی ہے کہ وقت گزرنے کیساتھ ہمیں سفر کرنے کی اجازت ملے اور کھیلوں کے میدان سجنا شروع ہو جائیں لیکن مجھے یہ مستقبل قریب میں ہوتا نظر نہیں آ رہا۔

قومی ہاکی ٹیم،کھلاڑیوں کے فٹنس ٹیسٹ مکمل

قومی ہاکی ٹیم کے ہیڈ کوچ خواجہ جنید کا کہنا ہے کہ دو دنوں میں 35 سے زائد کھلاڑیوں کے ویڈیوز کے ذریعے فٹنس ٹیسٹ مکمل کر لیے گئے۔ قومی ہاکی ٹیم کے ہیڈ کوچ خواجہ جنید نے کہا کہ لاک ڈاؤن کے دوران ویڈیوز کے ذریعے کھلاڑیوں کے فٹنس ٹیسٹ مکمل کر لیے گئے ہیں۔خواجہ جنید نے بتایا کہ 3 ہفتوں کی فٹنس ٹریننگ کے بعد 2 دنوں میں 35 سے زائد کھلاڑیوں کی فٹنس کا ویڈیوز کے ذریعے جائزہ لیا گیا۔قومی ہاکی ٹیم کے ہیڈ کوچ کا کہنا تھا کہ خوشی ہے مشکل اور محدود حالات میں کھلاڑیوں نے فٹنس پر کام کیا، ابتدائی رپورٹس کے مطابق کھلاڑیوں کا فٹنس لیول برقرار رکھنا خوش آئند ہے۔خواجہ جنید نے کہا کہ کھلاڑیوں کو روزوں کے دوران نیا فٹنس پلان دیا جائے گا، تفصیلی رپورٹ بنائی جا رہی ہے جس کے بعد کھلاڑیوں کو پلان دیں گے۔انہوں نے مزید کہا کہ کھلاڑیوں کو روزوں کے دوران سختی سے ڈائٹ پلان پر عمل کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔

باکسر عامر خان نے لیاری کے 1500 گھرانوں کو راشن پہنچا دیا

پاکستانی نڑاد برطانوی باکسر کی طرف سے کراچی کے قدیم علاقے لیاری کے 15 سو مستحق گھرانوں کے لیے راشن کی فراہم کردیاگیا۔انٹرنیشنل باکسر عامر خان کی جانب سے پاکستان میں مستحقین کے لیے راشن کی تقسیم کا سلسلہ جاری ہے جب کہ ان کی طرف سے کراچی کے قدیم علاقے لیاری کے 15 سو مستحق گھرانوں کے لیے راشن کی فراہم کردیاگیا، قومی باکسرنادربلوچ کی مدد سے راشن کی تقسیم کا سلسلہ جاری ہے۔سابق عالمی چیمپئن عامر خان کا کہنا ہے کہ لیاری باکسنگ کا گڑھ ہے، لیاری کے لوگ کھیلوں خاص طور پر باکسنگ سے بہت محبت کرتے ہیں،مستحقین کو راشن کی فراہمی میری لیاری سے محبت کا اظہار ہے،پاکستان میں 12 ہزار راشن بیگ تقسیم کیے ہیں،60 ہزار مستحق افراد مستفید ہوں گے۔

کورونا وبا،سافٹ بال ورلڈ کپ کورونا کے باعث ملتوی

سافٹ بال ورلڈ کپ کورونا وائرس کے باعث ملتوی کر دیا گیا ہے۔ترجمان کورونا وائرس کے باعث ورلڈ بیس بال سافٹ بال کنفیڈریشن نے ورلڈ کپ ملتوی کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ سافٹ بال ورلڈ کپ اگلے برس 20 سے 28 فروری تک نیوزی لینڈ میں شیڈول تھا۔ترجمان کنفیڈریشن کے مطابق طبی ماہرین اور حکومتی عہدیداروں سے مشاورت کے بعد سافٹ بال ورلڈ کپ 2022 تک کے لیے ملتوی کیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ باہمی مشاورت سے میگا ایونٹ کی نئی تاریخوں کا فیصلہ کیا جائے گا۔انڈر 18 ویمنز سافٹ بال ورلڈ کپ اور انڈر 18 بیس بال ورلڈ کپ بھی ملتوی کیے جا چکے ہیں۔ اس کے علاوہ یورپ اور ایشیا میں ہونے والے بیس بال اور سافٹ بال کے ٹورنامنٹس ملتوی ہو چکے ہیں۔دوسری جانب نیوزی لینڈ میں آئی سی سی ویمنز کرکٹ ورلڈ کپ کا انعقاد بھی خدشات کا شکار ہے۔آئی سی سی ویمنز کرکٹ ورلڈ کپ اگلے برس 6 فروری سے 7 مارچ تک شیڈول ہے۔

باکسرکونر مکگریگور نے،1 ملین یورو عطیہ کر دیا

آئرلینڈ سے تعلق رکھنے والے معروف باکسر اور مارشل آرٹسٹ کونر مکگریگور نے کروناوائرس کے خلاف جنگ میں اسپتال کو 1 ملین یورو عطیہ کیا۔غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق یو ایف سی اسٹار کونر کی جانب سے دی گئی امداد آئرلینڈ میں قائم ’مرسی‘ نامی اسپتال پہنچ گئی جس پر انتظامیہ نے کھلاڑی کا شکریہ ادا کیا۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ 1 ملین یورو کی مد میں خریدی گئیں طب کی ضروری اشیاء، اسپتال اسٹاف کے لیے حفاظتی سامان اور کروناوائرس سے لڑنے کے لیے آلات اسپتال پہنچ گئے، امداد میں آکسیجن ایکیوپمنٹس بھی شامل ہیں۔دنیا بھی کی طرح آئرلینڈ میں بھی کروناوائرس تیزی سے پھیل رہا ہے۔ اب تک ملک میں 16 ہزار کیسز رپورٹ ہوئے جبکہ مرنے والوں کی مجموعی تعداد 730 ہوچکی ہے۔خیال رہے کہ کروناوائرس کے خلاف جنگ میں دنیا بھر میں معروف کھلاڑی، فن کار ودیگر شعبوں سے تعلق رکھنے والے افراد بھی بڑھ چڑھ کر حصہ لے رہے ہیں۔ وبائی مرض سے دنیا بھی اب تک ایک لاکھ سے زائد افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔

مزید :

ایڈیشن 1 -