عوام کیلئے لاک ڈاؤن سخت،ڈبل سواری پر پابندی لیکن اسٹریٹ کرمنلز آزاد

عوام کیلئے لاک ڈاؤن سخت،ڈبل سواری پر پابندی لیکن اسٹریٹ کرمنلز آزاد

  

کراچی(کرائم رپورٹر) شہر قائد میں عوام کے لیے سخت لاک ڈاؤن ہے، ڈبل سواری پر پابندی عائد ہے لیکن اسٹریٹ کرمنلز آزاد گھوم پھر کر وارداتیں کر رہے ہیں۔ذرائع کے مطابق سخت لاک ڈاؤن اور ڈبل سواری پر پابندی کے دوران کراچی کے مختلف علاقوں میں آزادانہ وارداتیں ہو رہی ہیں، عزیز آباد اور بلدیہ میں ڈکیتی اور چوری کی وارداتوں کی سی سی ٹی وی فوٹیج بھی منظر عام پر آ گئی ہے۔کراچی کے علاقے عزیز آباد میں گزشتہ شام راہ چلتی خواتین طبی عملے سے لوٹ مار کی گئی، سی سی ٹی وی فوٹیج میں موٹر سائیکل پر سوار ملزمان کو لوٹ مار کرتے دیکھا جا سکتا ہے۔ادھر کراچی کے علاقے بلدیہ میں بھی 7 افراد موٹر سائیکل چوری کر کے فرار ہو گئے، ڈکیت گروہ گرفتاری سے بچنے کے لیے واردات میں بچوں کا استعمال کرنے لگے ہیں، اس سلسلے میں اے آر وائی نیوز پر چلائی گئی سی سی ٹی وی فوٹیج میں موٹر سائیکل لفٹر گروہ کو واضح دیکھا جا سکتا ہے۔فوٹیج میں دیکھا گیا کہ 2 موٹر سائیکلوں پر گروہ کے کارندوں نے کم عمر بچوں کو بھی بٹھا رکھا ہے۔گزشتہ روز کراچی میں موٹر سائیکل لفٹرز نے سرکاری ادارے واٹر بورڈ کی آنکھ میں بھی دھول جھونک دی تھی، ملزمان چوری کی موٹر سائیکل واٹر بورڈ کے دفتر میں لے جا کر رنگ کرنے کے بہانے کھول رہے تھے، اس دوران موٹر سائیکل کا مالک واٹر بورڈ کے دفتر پہنچ گیا اور ویڈیو بنا لی، پولیس نے ایک ملزم کو گرفتار کر لیا جب کہ 2 مفرور ساتھیوں کی تلاش جاری ہے۔کراچی کے ایک اور علاقے سچل صفورا کے قریب دن دہاڑے ڈکیتی کی واردات کی گئی ہے، واردات کی سی سی ٹی وی فوٹیج کے مطابق ایک ڈکیت نے ماسک اور دوسرے نے ہیلمٹ پہن رکھا تھا، ڈکیت نے اسلحے کے زور پر دکان میں کسٹمر اور دکان دار سے لوٹ مار کی، کسٹمرز کو دھکے دیے گئے اور مارا پیٹا اور زمین پر بٹھا دیا، ڈکیتوں نے دکان سے 1 لاکھ سے زائد رقم اور موبائل فون چھینے۔واضح رہے کہ کراچی میں لاک ڈان کا 41 واں روز ہے، شہریوں کی بلا ضرورت نقل و حرکت پر پابندی عائد ہے، ڈبل سواری بھی ممنوع ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -