افطاری کے بعد ون ویلنگ کرنے پر 17نوجوان گرفتار

افطاری کے بعد ون ویلنگ کرنے پر 17نوجوان گرفتار

  

 پشاور(کرائمز رپورٹر) سٹی ٹریفک پولیس پشاو نے افطاری کے بعد ون ویلنگ کرنیوالوں کیخلاف کارروائیاں کرتے ہوئے 17 منچلے نوجوانوں کو گرفتار کر کے موٹر سائیکلیں ٹرمینل میں بند کردیں۔ تفصیلات کے مطابق چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت نے افطاری کے فوراً بعد منچلے جوانوں کی جانب سے سنسان سڑکوں پر خطرناک طریقے سے ون ویلنگ کرنے پر مختلف سیکٹروں میں رمضان المبارک میں رش کم کرنے کیلئے تعینات سپیشل پٹرولنگ موبائلز کو ون ویلنگ کرنیوالوں کیخلاف کارروائی کی ہدایت کی جس پر سپیشل پٹرولنگ فورس نے مختلف سیکٹروں میں کارروائیاں عمل میں لائیں اور 17 منچلے نوجوانوں کو گرفتار کر کے موٹر سائیکلیں 523/550 کے تحت ضبط کرکے ٹرمینل میں بند کردیں۔ چیف ٹریفک آفیسر عباس مجید خان مروت نے سٹی ٹریفک پولیس پشاور کے اہلکاروں کو افطاری کے فوراً بعد ڈیوٹی انجام دینے کی ہدایت کی ہے اور کہا ہے کہ وہ نوجوانوں کی جانب سے ون ویلنگ پر کارروائیاں عمل میں لاکر ان کے والدین سے ملیں اور ان سے باقاعدہ تحریری طور پر ضمانت لیکر چھوڑیں اور آئندہ گرفتاری پر سخت قانونی کارروائی کریں۔ انہوں نے مزید کہا کہ نوجوان طبقہ ون ویلنگ جیسی لعنت سے گریز کریں اور اپنی زندگیوں کو محفوظ بنائیں چھوٹی سی غلطی ان کی پوری زندگی کو معذوری اور قیمتی جان کی ضیاع کا سبب بن سکتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ سٹی ٹریفک پولیس پشاور کی جانب سے ون ویلنگ کرنیوالوں کیخلاف کارروائیاں جاری ہیں جبکہ والدین بھی اپنے بچوں کو اس خطرناک کھیل سے منع کرکے انکی زندگیاں محفوظ بنائیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -