محکمہ تعلیم، مانیٹرنگ فورس ملازمین کیخلاف فرضی درخواستیں دینے کاانکشاف

محکمہ تعلیم، مانیٹرنگ فورس ملازمین کیخلاف فرضی درخواستیں دینے کاانکشاف

  

رحیم یار خان (بیورو رپورٹ)محکمہ تعلیم میں اے ای اوز کی کرپشن بے نقاب ہوگئی سینئر ٹیچرز کو سکولوں کا ہیڈ لگانے کی بجائے جونیئر ومن پسند ٹیچرز ہیڈ لگوانے کاانکشاف ہوا ہے، اے ای اوز ہیڈ ٹیچرز کے ذریعے فرضی درخواستوں اور آڈیو، ویڈیو حراسمنٹ ریکارڈنگ سے ایماندار افسران واہلکاران کو پھنسوانے لگیں، ضلعی انتظامیہ بھی اس کرپٹ گروہ کی مکمل سرپرستی میں ملوث، کارروائی خواب بن کر رہ گئی، تفصیل کے مطابق محکمہ تعلیم میں تعینات میل، فی میل اے(بقیہ نمبر48صفحہ6پر)

 ای اوز نے اساتذہ تنظیموں کے ساتھ گٹھ جوڑ کرکے کرپشن کو پروان چڑھا رکھاہے، ذرائع کے مطابق اے ای اوز نے پرائمری،مڈل سکولوں میں سینئرز ٹیچرز کو نظرانداز کرکے جونیئرز اور من پسند ٹیچرز کو ہیڈ ماسٹرز لگوا کر کرپشن بے نقاب کرنے والے مانیٹرنگ فورس ملازمین، محکمہ کے ایماندار افسران وعملہ کیخلاف فرضی درخواستوں، آڈیو، ویڈیو حراسمنٹ کے بیانات کے ذریعے پھنسانا معمول بنا لیا ہے جنہیں ضلعی انتظامیہ کی مکمل حمایت حاصل ہے اور ان فرضی درخواستوں پر ضلعی انتظامیہ من چاہا فیصلہ دے کر اے ای اوز، اساتذہ تنظیموں کی کرپشن پر پردہ ڈال رہی ہے جس کی وجہ سے محکمہ تعلیم میں حق دار ذلیل و خوار ہونے پر مجبور ہیں، مقدس پیشہ کے کالے کرتوت منظر عام پر آنے کے بعد شہری و سماجی حلقوں نے تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اعلی حکومتی شخصیات اور اراکین اسمبلی سے نوٹس لے کر اصلاح واحوال کامطالبہ کیاہے۔

محکمہ تعلیم

مزید :

ملتان صفحہ آخر -