خانیوال،بیکریوں، مٹھائی دکانوں اورہوٹلوں پربیماریوں کی فروخت 

خانیوال،بیکریوں، مٹھائی دکانوں اورہوٹلوں پربیماریوں کی فروخت 

  

خانیوال (نمائندہ پاکستان)خانیوال شہر اور گردونواح میں بیکریوں اور مٹھائی کی دکانوں پر غیر معیاری گھی، گندے انڈے اور غیر معیاری میٹریل کیساتھ ساتھ کھادملے دودھ کا استعمال عروج پر ہے جبکہ ہوٹلوں پر غیر معیاری مصالحہ جات سے تیار کردہ کھانوں کی فروخت سے لوگ پیٹ سمیت آنتڑیوں کی بیماریوں میں مبتلا ہورہے ہیں ہسپتالوں میں معدہ خرابی کے مریضوں کی (بقیہ نمبر9صفحہ6پر)

تعداد گزشتہ دس دال کے دوران سب سے زیادہ بتائی گئی ہے جن کی وجہ سے ناقص اور غیر معیاری کھانے ہیں خانیوال شہر اور گردونوں میں بیکریوں پر بھی غیر معیاری سامان صحت کی خرابی کا موجب ہے اسی طرح ناقص صفائی کے انتظامات بھی بیماریوں کی جانب سے کسی قسم کی کارروائی نہ ہونے کی وجہ سے سڑک کنارے کھانے پینے کی اشیاء کھلے عام فروخت ہورہی ہیں جن پر تمام دن مکھیاں اور گردوغبار گرتا ہے جو انسانی صحت کیلئے انتہائی خطرناک ہے انتظامیہ مکمل خاموشی اختیار کئے ہوئے ہے۔

بیکریوں 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -