پیپلزپارٹی کی ملاوٹی جمہوریت کی سیاست عوام مسترد کرچکے، رانا ثناء اللہ 

پیپلزپارٹی کی ملاوٹی جمہوریت کی سیاست عوام مسترد کرچکے، رانا ثناء اللہ 

  

 لاہور(نمائندہ خصوصی)پاکستان مسلم لیگ (ن) پنجاب کے صدر رانا ثناء اللہ خاں نے وزیر تعلیم سندھ سعید غنی کے بیان پر سخت ردعمل دیتے ہوئے کہا ہے کہ ’توادھر ادھر کی نہ بات کر، یہ بتا کہ قافلہ کیوں لْٹا‘کا جواب پیپلزپارٹی، نہ بلاول اور نہ ہی سعید غنی کے پاس ہے سعید غنی اپنے چیئرمین کے”ٹھنڈا پانی پئیں اور آرام کریں“ کے مشورے پر عمل کریں جو انہوں نے جمہوریت کی پیٹھ میں خنجر گھونپنے کے بعددیا تھا کھوکھلے بیانات، بے بنیاد الزامات کا شورمچانے سے مائی باپ کی بی ٹیم بننے کی آپ کی حقیقت نہیں بدلے گی عوام جان چکے ہیں  رانا ثناء اللہ نے کہا کہ سعید غنی کا بیان پی پی پی کی گھبراہٹ کی علامت اور خفت مٹانے کی ناکام کوشش ہے  باپ سے سینٹ میں ووٹ لے کر اپوزیشن لیڈر بنانے کے بعدپی پی پی عوام کے سامنے اپنی عزت کھوچکی ہے پی پی پی کے اس طرز عمل پر محترمہ بے نظیر بھٹو شہید کی جمہوری جدوجداور قربانی آج شرمسار ہے  پیپلزپارٹی کی ملاوٹی جمہوریت کی سیاست عوام مسترد کرچکی ہے جو اپنی عزت خود کھو بیٹھتے ہیں، ان کا شاہد خاقان عباسی کی عزت کرنا نہ کرناکوئی اہمیت نہیں رکھتا سعید غنی شیخ رشید بننے کی کوشش نہ کریں  ہمیں جواب دینے کے بجائے الیکشن کمیشن کو جواب دیں پی پی پی ہمیں اپنا حریف سمجھتی ہے، لیکن ہم انہیں اپنا حریف اور مدمقابل نہیں سمجھتے ان کا کہنا تھا کہ سعید غنی کا ردعمل اسی طرح کا ہے جس طرح ڈسکہ الیکشن چوری کے بعد پی ٹی آئی کا تھاہمارا ہدف پی پی پی اور سعید غنی نہیں، ووٹ اور الیکشن چوری روکنا ہے ہمارا ہدف مہنگائی کا عذاب عوام پر مسلط کرنے والے کرپٹ حکمرانوں سے پاکستان کو نجات دلانا ہے۔ا این اے 249کا الیکشن چوری کرنے، فارم 45 میں ردوبدل اور ووٹوں کی تعداد مصنوعی طورپر بڑھانے کا سعید غنی اوران کی جماعت کے پاس کوئی جواب نہیں این اے 249 الیکشن چوری کے بعد سعید غنی کا بیان باپ پارٹی سے ووٹ لے کر سینٹ میں اپوزیشن لیڈر بنانے کے بعد بلاول بھٹو کی پریس کانفرنس جیسا ہے۔

رانا ثناء اللہ 

مزید :

صفحہ آخر -