ریاست انتقامی سیاست کی متحمل نہیں ہو سکتی،ناصر اقبال

  ریاست انتقامی سیاست کی متحمل نہیں ہو سکتی،ناصر اقبال

  

لاہور(پ ر)انٹرنیشنل ہیومن رائٹس موومنٹ کے مرکزی چیئرمین محمدناصراقبال خان نے کہاہے کہ ریاست انتقامی سیاست کی متحمل نہیں ہوسکتی۔ حکمرانوں کے منفی طرز سیاست سے ان کیخلاف عوامی نفرت میں شدت آئے گی۔عمران خان،شیخ رشید اورفوادچوہدری سمیت سیاسی رہنما ؤ ں کیخلاف مقدمات یقینا آمرانہ اقدامات کے ز مر ے میں آتے ہیں،بوگس مقدمات کو فوری خارج کیا جائے۔اتحادی حکومت کی انتقامی روش سے بدانتظامی کاسورج سوا نیزے پرآجائے گا۔ اتحادی حکمران ڈینگیں مارنے کی بجائے ڈیلیور کر یں ۔مسجدنبوی واقعہ ایک ہجوم کی ہیجان انگیزی کا شاخسانہ ہے تاہم اس کادفاع نہیں کیا جاسکتا۔بہر کیف اس میں ریاست مدینہ کے داعی عمران خان اورانتخابات کیلئے حلف نامہ میں نقب لگانیوالے کرداروں کوبے نقاب کرنیوالے شیخ رشید کوملوث کرنا حکمرانوں کی منتقم مزاجی اوربدنیتی ظاہرکے سوا کچھ نہیں۔اپنے ایک بیان میں محمدناصراقبال خان نے مزید کہا کہ جس کپتان نے ہرعالمی فورم پرناموس رسالت کاپہرہ دیا اوراسلاموفوبیا کیخلاف عالمی ضمیر کوجھنجوڑا اس پرحالیہ دلخراش واقعہ کاملبہ ڈالنا قابل برداشت نہیں۔ جس طرح مسجد الحرام پرحملے کے نتیجہ میں ابرہا کی فوج نابود ہوگئی تھی اس طرح دنیا جہاں کے ابوجہل، جنات اورشیاطین کی فوج ناموس رسالت سمیت مسجد نبوی کے تقدس میں رتی بھر کمی نہیں کرسکتی لہٰذاء اس ضمن میں مسلمانوں اورہماری صحافت کو اپنے الفاظ کاچنا?درست کرناہوگا، کسی قسم کے دلخراش واقعہ پرمحض "ناموس رسالت پرحملے کی ناکام جسارت" کہاجائے۔اپنے جس عزیزترین محبوب کاذکر خود معبود برحق نے بلندکردیا ہواسے دنیا کی کوئی شیطانی طاقت پست نہیں کرسکتی۔انہوں نے کہا کہ اللہ رب العزت کی برگزیدہ اور مقدس ہستیوں کیلئے لفظ "توہین"استعمال کرنا بذات خود توہین کے مترادف ہے۔اس قسم کے اندوہناک واقعات پرپوائنٹ سکورنگ کرنا یعنی بات کو اس واقعہ سے انجان افراد تک پہنچانابھی توہین آمیز ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -