ایران میں زہریلی شراب پینے سے اتنی ہلاکتیں کہ آپ کو بھی افسوس ہوگا

ایران میں زہریلی شراب پینے سے اتنی ہلاکتیں کہ آپ کو بھی افسوس ہوگا
ایران میں زہریلی شراب پینے سے اتنی ہلاکتیں کہ آپ کو بھی افسوس ہوگا

  

تہران (ڈیلی پاکستان آن لائن) ایران کے شہر بندر عباس میں زہریلی شراب پینے سے آٹھ افراد ہلاک ہوگئے۔عرب نیوز کے مطابق بندر عباس میں گھر میں تیار کی گئی زہریلی شراب پینے والے 51 افراد کو ہسپتال بھی منتقل کیا گیا ہے جہاں ان کا علاج جاری ہے۔ محکمہ صحت کی آفیشل ڈاکٹر فاطمہ نوروزین  نے ایک نیوز کانفرنس کے دوران بتایا کہ زہریلی شراب کے باعث ہسپتا ل میں داخل ہونے والے 17 افراد کی حالت انتہائی نازک ہے اور انہیں آئی سی یو میں رکھا گیا ہے جب کہ دیگر 30 افراد کے گردے واش کیے جا رہے ہیں۔

خیال رہے کہ ایران میں شراب پر مکمل طور پر پابندی ہے اور اس جرم میں 80 کوڑوں تک سزا دی جاسکتی ہے لیکن حالیہ عرصے کے دوران ایران میں شراب نوشی کے واقعات میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔ اپریل 2020 میں ایران کی وزارت صحت نے بتایا تھا کہ صرف تین مہینے کے عرصے میں زہریلی شراب پینے سے 500 افراد ہلاک  جب کہ پانچ ہزار ہسپتالوں میں داخل ہوئے تھے۔

مزید :

بین الاقوامی -