لاہور میں ڈینگی کی مریضہ دم توڑ گئی، ورثاءکا ڈاکٹروں پر غفلت کا الزام اور احتجاج

لاہور میں ڈینگی کی مریضہ دم توڑ گئی، ورثاءکا ڈاکٹروں پر غفلت کا الزام اور ...

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) ڈینگی کے باعث لاہور میں ہلاکتیں شروع ہو گئی ہیں جس کا پہلا شکار ایک خاتون عروج فاطمہ بنی ہے جس کے ورثاءنے ڈاکٹروں پر غفلت کا الزام لگایا ہے جبکہ ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ مریضہ ڈینگی کے ساتھ ساتھ متعدد دوسرے امراض میں بھی مبتلا تھی۔ جیو نیوز کے مطابق عروج فاطمہ لاہور کے جناح ہسپتال میں علاج کے دوران دم توڑ گئی تو ورثاءنے اس پر احتجاج کیا اور ڈاکٹروں پر غفلت کا الزام لگایا۔ ورثاءکا کہنا تھا کہ عروج فاطمہ 10 روز تک زیر علاج رہی انہیں میگا کٹ لانے کیلئے کہا گیا اسی دوران وہ سات گھنٹے تک تڑپتی رہی لیکن کسی نے توجہ نہ دی اور آئی سی یو میں شفٹ نہ کیا جس کے نتیجے میں وہ دم توڑ گئی۔ اس واقعے کی اطلاع ملتے ہی وزیراعلیٰ کے معاون خصوصی برائے صحت خواجہ سلمان رفیق نے انکوائری کی ہدایت کی ۔ انکوائری کمیٹی نے اپنی رپورٹ میں واضح کیا کہ مریضہ کو 10 روز سے بخار تھا اور اس کے علاوہ وہ ہیپاٹائٹس سی اور بون میرو ڈپریشن میں مبتلا تھی۔

مزید : لاہور