219یرغمال لڑکیاں بیاہی جا چکی ہیں، بوکو حرام

219یرغمال لڑکیاں بیاہی جا چکی ہیں، بوکو حرام

  

ابوجہ(این این آئی) نائجیریا کے اسلامی شدت پسند گروہ بوکو حرام کے رہنما ابو بکر شیخو نے یہ کہا ہے کہ چیبوک کے ایک اسکول سے اغوا کی جانے والی 219 لڑکیوں نے مذہب اسلام قبول کر لیا ہے اور ان کی شادیاں کر دی گئی ہیں۔اسکول کی طالبات کو ریاست بورنو کے چیبوک نامی ایک علاقے سے اپریل میں اغوا کیا گیا تھا اور ابھی تک ان کا سراغ نہیں مل سکا ۔فرانسیسی خبررساں ادارے کو ایک تازہ ویڈیو پیغام میں انہوں نے کہاکہ16 جولائی کو شمال مشرقی علاقے گومبی سے جرمن شہری کو اسی کے جنگجوو¿ں نے اغوا کیا تھا اور وہ اب بھی اسی گروہ کے قبضے میں ہے۔ یہ جرمن شہری مبینہ طور پر وہاں ایک حکومتی تربیتی اسکول میں پڑھا رہا تھا۔ جرمن وزارت خارجہ نے اس ویڈیو پر تبصرہ کرنے سے انکار کر دیا ہے۔انہوں نے کہاکہ ہم نے کسی کے ساتھ سیز فائر نہیں کیا ہے۔ ہم کسی کے ساتھ مذاکرات نہیں کر رہے ہیں۔ یہ ایک جھوٹ ہے۔ ہم مذاکرات نہیں کریں گے۔ ہمارا اس مذاکراتی عمل سے کیا تعلق۔ اللہ نے ہمیں ایسا کرنے سے منع کیا ہے۔شیخو نے کہاکہ کیا آپ نہیں جانتے کہ اسکول کی بچیوں نے اسلام قبول کر لیا ہے۔ انہوں نے تو اب قرآن کے دو پارے بھی حفظ کر لیے ہیں۔

 انہوں نے دعویٰ کیا کہ یہ لڑکیاں شادی کے بعد اپنے نئے گھروں میں پہنچ چکی ہیں۔

مزید :

عالمی منظر -