خاتون کو 15 برس تک بچپن میں بچھڑجانے والے بھائی کی تلاش، بالآخر ملا تو ایسے روپ میں کہ زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا دے دیا، خود ہی شرما کر رہ گئی کیونکہ۔۔۔

خاتون کو 15 برس تک بچپن میں بچھڑجانے والے بھائی کی تلاش، بالآخر ملا تو ایسے ...
خاتون کو 15 برس تک بچپن میں بچھڑجانے والے بھائی کی تلاش، بالآخر ملا تو ایسے روپ میں کہ زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا دے دیا، خود ہی شرما کر رہ گئی کیونکہ۔۔۔

  



لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) برطانیہ میں ایک خاتون اپنے بچپن کے بچھڑے بھائی کو15سال تک تلاش کرتی رہی۔ بالآخر جب اسے اپنا بھائی ملا تو اسے اسے زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا کیونکہ اس کا وہ بھائی دراصل اس کی بہن بن چکا تھا۔ میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق لنکا شائر کی رہائشی 58سالہ لنڈا وائن کوکم عمری میں ہی ایک خاتون نے گود لے لیا تھا اور وہ اپنے خاندان سے جدا ہو گئی۔ 15سال قبل اس نے اپنی ماں، بہن شیریل اور بھائی سٹیفن کو تلاش کرنا شروع کیا۔ اس نے سب سے پہلے اپنی ماں سے رابطہ کرنے کی کوشش کی تاہم ناکام ہو گئی۔ پھر اس نے اپنے فیملی نام ”ایڈ“ کی مدد سے اپنے بہن اور بھائی کی تلاش شروع کر دی۔ بالآخر 15سال کی جدوجہد کے بعد 2013ءمیں فیس بک پر میلیسا ایڈ نامی خاتون نے اس کی فرینڈ ریکوئسٹ منظور کر لی۔ لنڈا کا خیال تھا کہ یہ اس کے بھائی کی بیوی ہو گی مگر جب اسے نے میلیسا کی پروفائل پڑھی اور اس کی تصویر کو بغور دیکھا تو یہ جان کر حیران رہ گئی کہ وہ دراصل اس کا بھائی تھا جو جنس تبدیل کروانے کے بعد عورت بن چکا تھا۔ اس انکشاف کے باوجود لنڈا نے اس سے رابطہ کیا۔ اب دونوں بہن بھائی ”بہنوں“ کی طرح رہتے ہیں اور دونوں بہت اچھی سہیلیاں بھی بن چکے ہیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس