ٹیسٹ سیریز میں شکست کی وجہ جادو نہیں خراب بیٹنگ تھی : سرفراز احمد

ٹیسٹ سیریز میں شکست کی وجہ جادو نہیں خراب بیٹنگ تھی : سرفراز احمد

لاہور(سپورٹس رپورٹر)قومی ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے سری لنکن کپتان دنیش چندیمل کی جانب سے پاکستان کے خلاف کلین سویپ کو جادوگری کا شاخسانہ قرار دئیے جانے کے دعوے کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہمیں خراب بیٹنگ کی وجہ سے شکست ہوئی۔سرفراز احمد نے کہا کہ ہم محض اپنی خراب بیٹنگ کی وجہ سے ٹیسٹ میچ ہارے اور اسے سے زیادہ کچھ نہیں۔ اگر وہ جادو کی مدد سے ٹیسٹ میچز جیت سکتے ہیں تو پھر انہیں ون ڈے اور ٹی20 میچز بھی جیتنا چاہیے تھے۔سرفراز نے کہا کہ مسلمان ہونے کی حیثیت سے میں قرآن کریم پر یقین رکھتا ہوں اور اس بات پر بھی کہ دنیا میں جادو موجود ہے لیکن ٹیسٹ سیریز میں ہماری شکست کی وجہ ناقص بیٹنگ تھی، ہم نے خراب بیٹنگ اور جیتنے کے مواقع گنوائے۔قومی ٹیم کے کپتان نے مزید واضح کیا کہ کرکٹ میں قسمت کا عمل دخل ضرور ہوتا ہے لیکن میدان میں میچز کھلاڑیوں کی کارکردگی سے ہارے یا جیتے جاتے ہیں۔پاکستان کے سابق کپتان محمد یوسف نے بھی دنیش چندیمل کے بیان کو بے مقصد قرار دیا۔انہوں نے کہا کہ کرکٹ کو ان سب چیزوں سے نہ ملائیں، پاکستان کی منصوبہ بندی غلط تھی اور وہ اچھے کھیل کا مظاہرہ کرنے میں ناکام رہے۔انہوں نے کہا کہ اگر جادو کی مدد سے کرکٹ میچز جیتے جاتے تو سری لنکا کو کھیل کے متمام شعبوں میں جدوجہد کا سامنا نہیں کرنا پڑتا۔واضح رہے کہ پاکستان سے سیریز کے بعد کولمبو واپسی پر چندیمل نے کہاتھا کہ متحدہ عرب امارات میں دو ٹیسٹ میچوں کی سیریز سے قبل انہوں نے جادوگر سے خصوصی دعائیں لیں، میں ہر وقت ہر کسی سے دعائیں لینے کیلئے تیار رہتا ہوں چاہے وہ جادوگر ہو یا پادری۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی