سٹی رائیونڈ ، نجی کلینک میں ڈاکٹر کے غیر معیاری انجکشن سے 9ماہ کا بچہ جاں بحق

سٹی رائیونڈ ، نجی کلینک میں ڈاکٹر کے غیر معیاری انجکشن سے 9ماہ کا بچہ جاں بحق

لاہور (خبرنگار) سٹی رائیونڈ کے علاقے میں نجی کلینک میں ڈاکٹر کے غیر معیاری انجکشن لگا نے سے 9ماہ کا بچہ تڑپ تڑپ کر جاں بحق ہو گیا ۔ متوفی کے ورثاء کی جانب سے کلینک کے باہر شدید احتجاج کیا گیا ، ڈاکٹر کلینک چھوڑ کر فرار ہو گیا ۔ پولیس نے لاش قبضہ میں لیکر پوسٹ مارٹم کے لئے مردہ خانے منتقل کر کے مقدمہ درج کرکے تفتیش شروع کر دی ہے ۔ بتایا گیا ہے کہ سٹی رائیونڈ کے علاقے محلہ اسلام آباد قصور رورڈ کے رہائشی محنت کش محمد اعظم کا 9ماہ کابیٹا محمد شاہ زیب اچانک بیمار ہو گیا تو اس کے والدین علاج کی غرض سے سند ر روڈ پر واقعہ ڈاکٹر عادل کے کلینک میں لے گئے جہاں پر ڈاکٹر عادل نے بچے کے والد کو انجیکشن لانے کا کہا بچے کا والد انجکشن لیکر ڈاکٹر کے پاس آیا جیسے ہی ڈاکٹر نے بچے کو انجکشن لگایا تو بچہ تڑپنا شروع ہو گیا اور چند ہی منٹوں میں دم توڑ گیا جس پر بچے کے والدین نے کلینک میں احتجاج شروع کر دیا ڈاکٹرعادل موقع سے فرار ہو گیا اطلاع ملنے پر تھانہ سٹی رائیونڈ کی پولیس موقع پر گئی اور لاش کو اپنی تحویل میں لیکر پوسٹ مارٹم کے لئے مردہ خانے منتقل کر دیا پولیس کی جانب سے ڈاکٹر کے خلاف مقدمہ درج کرنے کی یقین دہانی پر ورثاء نے احتجاج ختم کر دیا ۔ متوفی شاہ ذیب دو بہنوں کا اکلوتا بھائی تھا ، پولیس نے متوفی کی خالہ شمائلہ بی بی کی مدعیت میں مقدمہ درج کرلیا ہے تاحال پولیس ملزم ڈاکٹر کو گرفتار نہ کر سکی ہے ۔ متوفی کا والد کینسر کا مریض ہے ۔

مزید : علاقائی