سعودی عرب سے پاکستان کی آبادی کے تناسب سے کوٹہ حاصل کیا جائے

سعودی عرب سے پاکستان کی آبادی کے تناسب سے کوٹہ حاصل کیا جائے

لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)حج2018ء میں سرکاری اور پرائیویٹ حج سکیم کے انتظامات کو مزید بہتر کرنے کے لیے وزارت مذہبی امور اور ہوپ سندھ کے زیر اہتمام دوسری مشاورتی حج ورکشاپ 2018ء حاجی کیمپ کراچی میں منعقد ہوئی جس کی صدارت ڈائریکٹر حج کراچی سید امتیاز حسین شاہ نے کی ،ہوپ سندھ کے چےئرمین محمد سعید سمیت حج ڈائریکٹوریٹ کراچی کے اہلکاروں سمیت ہوپ کے ذمہ داران ،سرکاری اور پرائیویٹ سکیم کے 2017ء کے حجاج کرام کی بڑی تعداد نے شرکت کی ،حج ورکشاپ میں سرکاری حج سکیم کے حوالے سے تجاویز پیش کیں،سابقہ ادوار کی طرح کم ازکم 2قسم کے پیکج (ایک حرم پاک کے قریب اور دوسرا حرم پاک سے دور)ٹریفک کے بوجھ اور رہائشوں کی قیمتیں کم کرنے کے لیے مختلف علاقوں کی رہائش،حرم کے قریب کے پیکج کو حج2018ء میں لازمی متعارف کروانے،موجودہ مردم شماری کی روشنی میں پاکستان کا کوٹہ بڑھانے کی کوشش،گورنمنٹ سکیم میں حجاج کی رہنمائی کو مزید بہتر بنانے کے لیے تربیتی پروگراموں کو زیادہ اور بہتر کرنے ،منیٰ ،عرفات اور مزدلفہ میں سرکاری حجاج کی رہنمائی کے لیے گروپ کے ساتھ تجربہ کار معاونین مقرر کرنے،مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں کھانے کے معیار اور اس کی تقسیم کے طریقہ کار کو مزید بہتر کرنے ،حج اپریشن کرنے والی تمام ائیر لائنز کو کم سے کم 40کلو فی حاجی وزن لانے کا پابند کیا جائے اور جدہ سے مکہ،مکہ سے جدہ ائیرپورٹ ،مدینہ ائیرپورٹ سے مدینہ ہوٹل اور مدینہ ہوٹل سے مدینہ ائیر پورٹ کے سفر کے لیے دی جانے والی بسوں کے معیار کو بہتر کر کے کم از کم 2015ء ماڈلکی بسوں پر لانے کی تجاویز سامنے آ گئیں،پرائیویٹ حج سکیم کے بارے میں دی جانے والی تجاویز میں موجودہ مردم شماری کے نتائج سے سعودی عرب کو آگاہ کرتے ہوئے پاکستان کی موجودہ آبادی کے تناسب سے کوٹہ حاصل کیا جائے،گورنمنٹ اور پرائیویٹ سکیم کا کوٹہ 50/50فیصد کیا جائے ،سعودی عرب کی جانب سے اضافی کوٹہ حاصل کرنے کی صورت میں گزشتہ5سال یا اس سے زیادہ تجربہ رکھنے والی وہ حج کمپنیاں جن کے خلاف کوئی شکایت نہیں ان کا کوٹہ بڑھایا جائے اور50کے کوٹہ والی کمپنیوں کا کوٹہ مزید بڑھا کر کم ازکم100کیا جائے ،حج آرگنائزر کو 2سال کا ملٹی پل ویزہ دیا جائے جس پر وہ حج ایگریمنٹ کر سکیں ،بائیو میٹرک کو حج پر لاگو نہ کیا جائے اور اگر اس کی انتہائی اشد ضرورت ہو تو اس کا آسان طریقہ واضع کیا جائے ،سعودی عرب میں وزارت حج سے بات کر کے حج آرگنائزرز اس کے ڈائریکٹر اور سٹاف کو اضافی حج فیس 2000 ریال سے مستشنٰی کیا جائے،ہوپ کے چےئرمین محمد سعید نے تمام حجاج کرام اور عہدیداران سے ان کی آمد کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ پرائیویٹ سیکٹر کی جانب سے کامیاب حج اپریشن کو مدِ نظر رکھتے ہوئے حج آرگنائزر کو 5سال کے لیے رجسٹرڈ کرنے کی تجویز دی تاکہ وہ مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ میں مستقل اور اور بہتر ریٹ پر رہائشیں حاصل کر کے حجاج کرام کو مزید بہتر اور مناسب قیمت پر سہولیات فراہم کر سکیں ،ورکشاپ کے اختتام پر ڈائریکٹر حج کراچی سید امتیاز حسین شاہ نے تمام تجاویز کو بغور سننے کے بعد کہا کہ چند روز قبل لاہور میں ہونے والی ورکشاپ کی طرح یہ ورکشاپ بھی حج2018ء کی پالیسی کو بہتر بنانے کے لیے مشاورت کرنے اور تجاویز اکٹھا کرنے کے لیے کی گئی ہے اور آئندہ کچھ دنوں میں اسلام آباد ،پشاور اور کوئٹہ میں بھی ورکشاپس کا انعقاد کیا جائے گا اور حاصل ہونے والی تمام تجاویز کی روشنی میں انشاء اللہ حج2018ء کے لیے پہلے سے مزید بہتر حج پالیسی مرتب کی جائے گی۔

مزید : صفحہ آخر