افغانستان میں دہشگردی کے خاتمے کیلئے مذاکرات ضروری : پاکستان

افغانستان میں دہشگردی کے خاتمے کیلئے مذاکرات ضروری : پاکستان

اسلام آباد (آن لائن) ڈاکٹر محمد فیصل نے نئے ترجمان دفتر خارجہ کی حیثیت سے پہلی بریفنگ میں میڈیا سے سوالوں کے جوابات میں کہا کہ پاکستان افغان قیادت میں مذاکرات کا حامی ہے ۔ افغانستان میں دہشتگردی کے خاتمے کے لئے مذاکرات کرنا ہوں گے ،پاکستان نے بھارت کے ساتھ حل طلب معاملات کے لئے تمام دروازے کھلے رکھے ہیں، البتہ بھارت اس معاملے میں سنجیدہ نہیں ہے ۔ ہم دونوں ہمسایہ ممالک کے ساتھ دوستانہ تعلقات کو بڑھانے کے خواہش مند ہیں ۔ انہوں نے بتایا کہ گزشتہ روز ایران اور پاکستان نے افغانستان میں امن و استحکام اور سلامتی کے لئے بات چیت کی ۔ افغانستان کے ڈپٹی گورنر کے لاپتہ ہونے کے حوالے سے ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ وہ نجی دورے پر پشاور آئے تھے مگر حکومت کو باقاعدہ اطلاع نہیں دی گئی البتہ پاکستان اس کی تلاش اور بازیابی کے لئے کوششیں کر رہا ہے ۔ ملافضل اللہ افغانستان میں بیٹھ کر پاکستان میں دہشتگردی کی کارروائیوں میں ملوث ہے ۔ امریکہ کے ساتھ باہمی تعلقات کے بارے میں انہوں نے بتایا کہ پاکستان امریکہ کے ساتھ برابری کی سطح کے تعلقات چاہتا ہے ۔

ترجمان دفتر خارجہ

مزید : علاقائی