اہداف کے حصول کیلئے تمام وسائل بروئے کار لائے جائیں گے :عنایت اللہ

اہداف کے حصول کیلئے تمام وسائل بروئے کار لائے جائیں گے :عنایت اللہ

پشاور (سٹاف رپورٹر) خیبر پختونخوا کے سینئر وزیر بلدیات ودیہی ترقی عنایت اللہ نے اس عزم کا اعادہ کیا ہے کہ پائیدار ترقی کے اہداف کے حصول کے لئے تمام وسائل بروئے کار لائے جائیں گے صوبائی حکومت نے صوبے بھر میں پہلے ہی سینی ٹیشن اپ سکیلنگ اور انسانی فضلے سے پاک دیہات کے لئے گائیڈ لائنز جاری کر دی ہیں صوبائی حکومت محکمہ بلدیات کے تحت صفائی ستھرائی اور صاف پانی کی فراہمی پر 10 ارب روپے خرچ کر رہی ہے جبکہ ضلعی، تحصیل، ٹاؤن، ویلج ونیبر ہوڈ کونسلوں کی ایڈمنسٹریشن کو واٹر اینڈ سینی ٹیشن کے لئے بجٹ کا 30 فیصد مختص کرنے کا پابند بنایا گیا ہے ۔ وہ واٹسن سیل محکمہ بلدیات کے زیر اہتمام یونیسف ، پلان پاکستان اور دیگر امدادی اداروں کے تعاون سے صوبائی سینی ٹیشن کانفرنس کی اختتامی سیشن سے خطاب کر رہے تھے ، ڈسٹرکٹ ناظم دیر صاحبزادہ فصیح اللہ، سیکرٹری بلدیات سید جمال الدین شاہ، سیکرٹری پبلک ہیلتھ نظام الدین، یونیسف کے چیف فیلڈ آفیسر گوئل کتکا، چیف انجینئر پبلک ہیلتھ بہرہ مند خان، محکمہ بلدیات پنجاب کے ڈپٹی سیکرٹری بلدیات نجیب اسلم، چیف ایگزیکٹو آفیسر ڈبلیو ایس ایس پی انجینئر خان زیب خان، انجینئرنگ یونیورسٹی کے ڈاکٹر راشد ریحان،کوآرڈی نیٹر واٹسن سیل سید رحمٰٰن، ڈبلیو ایس ایس سیز کے چیف ایگزیکٹو آفیسر اور دیگر نے بھی کانفرنس سے خطاب کیا۔ ایک روزہ کانفرنس میں ضلعی حکومتوں، ٹی ایم ایز، واش سیکٹر میں کام کرنے والے امدادی اداروں، غیر سرکاری تنظیموں، محکمہ ہائے صحت، تعلیم، بلدیات کے نمائندوں نے شرکت کی۔ سینئر وزیر عنایت اللہ نے کہا کہ پینے اور استعمال کے صاف پانی کی فراہمی اور گندگی سے پاک صاف ماحول ہر انسان کا بنیادی حق اور ضرورت ہے صوبائی حکومت عوام کے اس حق تک رسائی بہتر بنانے کے لئے تمام وسائل بروئے کار لا رہی ہے۔ سینئر وزیر نے اسی سلسلے میں صوبہ بھر میں واٹسن سیل محکمہ بلدیات کے زیر اہتمام جاری خصوصی مہینہ صفائی کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ محکمہ بلدیات نے صوبہ بھر میں تمام ٹی ایم ایز اور مقامی حکومتوں کو اپنے اپنے دائرہ اختیار میں صفائی کو یقینی بنانے کے لئے جا مع ہدایت نامہ جاری کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ بلدیات وپبلک ہیلتھ انجینئرنگ کے اشتراک سے سینی ٹیشن پالیسی کا مسودہ تیار کرلیا گیا ہے حکومت صوبے کے بڑے قصبہ جات اور دیہات میں تجرباتی بنیادوں پر ویسٹ واٹر ٹریٹمنٹ پائلٹ پراجیکٹ شروع کرے گی ، دیہات کی صفائی کے لئے ماسٹر پلان کی تیاری کا کام جاری ہے سینی ٹیشن اپ سکیلنگ کے لئے پہلے ہی سے صوبائی سکریننگ کمیٹی کام کر رہی ہے اسی طرح موجودہ حکومت کی کوششوں سے صوبے کے 542 دیہات کو کھلی فضا میں انسانی فضلے سے پاک کیا گیا ہے ۔ سینئر وزیر نے حکومتی عزم کا اعادہ کرتے ہوئے کہا کہ محکمہ بلدیات صحت تعلیم پبلک ہیلتھ اور پلاننگ و ڈیولپمنٹ محکمہ جات، مقامی حکومتوں ، بین الاقوامی اداروں اور فلاحی تنظیموں کے باہمی تعاون سے صوبائی کانفرنس برائے سینیٹیشن کے خصوصی اعلامیہ میں درج نکات و سفارشات پر بھرپور عمل در آمد یقینی بنائیں گے ۔سیکرٹری بلدیات سید جمال الدین شاہ نے کہا کہ واٹر اینڈ سینی ٹیشن شعبے میں اہداف کے حصول کے لئے دیگر متعلقہ اداروں کے اشتراک سے کوششیں جاری ہیں سہولیات تک عوام کی رسائی، اقدامات کے تسلسل اور پانی وصفائی کے شعبے کے اہداف کی پائیداری اور تسلسل حکومت کا بنیادی مقصد ہے اگلی جنوبی ایشیائی سینی ٹیشن کانفرنس پاکستان میں ہوگی جس میں پاکستان واش سیکٹر میں کامیابیوں، چیلنجز اور جاری اقدامات سے مختلف ممالک کو آگاہ کرے گا۔ انہوں نے کہا کہ پائیدار ترقی کے اہداف کے حصول کے لئے تمام محکموں اور اداروں کو مشترکہ اقدامات اٹھانے ہوں گے۔

مزید : کراچی صفحہ اول