مہمند ایجنسی‘ محکمہ تعلیم‘ شہداء پیکج سے شہید استاد کے لواحقین تنخواہ سے محروم

مہمند ایجنسی‘ محکمہ تعلیم‘ شہداء پیکج سے شہید استاد کے لواحقین تنخواہ سے ...

مہمند ایجنسی(نمائندہ حصوصی پاکستان) محکمہ تعلیم غلنئی مہمند ایجنسی میں اندھیر نگری شہداء پیکج سے شہید استادکی کئی سالوں سے لواحقین کو تنخواہ نہ ملی۔ تفصلات کے مطابق دسمبر 2010 ؁ء میں غلنئی خودکش دھماکہ میں پی۔ایس۔ٹی معلم سید علیم شہید ہوچکا۔شہداء قوانین کے مطابق ساٹھ سال پوری نہ ہونے والی عمر تک باقاعدہ تنخواہ اور پنشن مل سکتی ہے۔ مگر محکمہ تعلیم کے حکام نے اسی وقت سے تنخواہ بند کرادی لواحقین نے کئی بار درخواستیں دیں اور ٹھوکریں کھائی تاہم ابھی موجودہ ایجنسی ایجوکیشن افیسر فرید اللہ وزیر نے فوری ایکشن لیتے ہوئے تنخواہ بمعہ بقایاجات دلانے کا حکم صادر کیا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر