پاکستان کا شناختی کارڈ حاصل کرنے والا چینی شخص کون ہے؟ حقیقت جان کر ہرپاکستانی دنگ رہ جائے گا

پاکستان کا شناختی کارڈ حاصل کرنے والا چینی شخص کون ہے؟ حقیقت جان کر ...
پاکستان کا شناختی کارڈ حاصل کرنے والا چینی شخص کون ہے؟ حقیقت جان کر ہرپاکستانی دنگ رہ جائے گا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) گزشتہ کچھ دنوں سے ایک چینی شہری کے پاکستانی شناختی کارڈ نے سوشل میڈیا پر نئی بحث چھیڑ دی ہے ، اکثر لوگ یہ سوال پوچھ رہے ہیں کہ اگر چینیوں کو شہریت دی جا سکتی ہے تو وہ افغان جن کی اکثریت پاکستان میں پیدا ہوئی انہیں کیوں یہاں کی شہریت نہیں دی جا سکتی؟ اس ساری بحث کے دوران وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال نے چینی شہری کو پاکستانی شناختی کارڈ کے اجرا کے بارے میں پایا جانے والا ابہام دور کرنے کیلئے حقائق عوام کے سامنے رکھ دیے۔

قائداعظم کی صاحبزادی دینا واڈیا 2004میں پاکستان آئیں تو مزار قائد پر جانے سے قبل انہوں نے کیا شرط رکھی ؟ جان کر آپ کی آنکھوں میں بھی آنسو آ جائیں گے

مزمل شاہ وطن یار نامی فیس بک صارف نے سب سے پہلے چینی شہری ”فنگ لن کوئی ولد ہشی پنگ سوئی “ کے شناختی کارڈ کا عکس فیس بک پر شیئر کیا اور کہا کہ چینی شہری آسانی کے ساتھ پاکستان کی شہریت حاصل کرسکتے ہیں لیکن افغان شہری یا ان کے وہ بچے جو اسی سرزمین پر پیدا ہوئے انہیں شہریت کے حق سے محروم رکھا جاتاہے، اس کے علاوہ ہزاروں پختونوں کے شناختی کارڈز بلاک کرکے انہیں مشکلات میں پھنسا دیا گیا ہے، اس نام نہاد اسلامی جمہوریہ پاکستان میں خوش آمدید جس کا دعویٰ ہے کہ اس کے دل میں تمام مسلمان بھائیوں کیلئے درد ہے۔

مزمل وطن یار کی جانب سے شیئر کیا گیا چینی شہری کے شناختی کارڈ کا عکس دیکھتے ہی دیکھتے سوشل میڈیا پر وائرل ہوگیا اور لوگوں نے اس پر سوال اٹھانا شروع کردیے۔ بعض لوگوں نے اسے افغان مہاجرین کی شہریت کے مسئلے کے ساتھ جوڑا تو کسی نے اسے سی پیک کا اثر قرار دیا۔

طارق افغان نامی ایک ٹوئٹر صارف نے بھی سوشل میڈیا پر فنگ لن کوئی کا شناختی کارڈ شیئر کیا اور سوال اٹھایا کہ کیا یہ سی پیک کے آفٹر افیکٹس ہیں۔ طارق افغان کے ٹویٹ پر وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال نے فوری طور پر جواب دیا اور بتایا کہ فنگ لن کوئی کے والدین کو 1989 میں پاکستانی شہریت سے نوازا گیا تھا ، اور یہ سی پیک کی پیدائش سے کئی دہائیاں پہلے کی بات ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس