بچی ملنے کی خوشی میں ماں نے ملزمہ نرس کو معاف کردیا

بچی ملنے کی خوشی میں ماں نے ملزمہ نرس کو معاف کردیا
بچی ملنے کی خوشی میں ماں نے ملزمہ نرس کو معاف کردیا

  

لاہور(نامہ نگار)ماں نے اغواءکی جانے والی بچی ملنے کے بعدنجی ہسپتال کی نرس ملزمہ ثمینہ کو معاف کردیا جس پر سیشن عدالت نے شیر خوار بچی ماں کے حوالے کرتے ہوئے دائر درخواست نمٹا دی ہے ۔

وینزوویلا کے صدر خطاب کے دوران پیٹِس کے مزے اڑاتے رہے

ایڈیشنل سیشن جج مرزاشاہدبیگ کی عدالت میں پنجاب یونیورسٹی کی رہائشی کرن نے اپنے وکیل کی وساطت سے درخواست دائر کی جس میں موقف اختیا رکیا گیا تھا کہ اس کے ہاں 12اکتوبر کونجی ہسپتال میں بیٹی پیدا ہوئی ،بے ہوشی کافائدہ اٹھاتے ہوئے اِسی ہسپتال کی ایک نرس ثمینہ نے مبینہ طور پرشیرخواربچی کوغائب کردیا،لہذا عدالت بچی کو بازیاب کرواکرماں کے حوالے کرنے کا حکم دے ،عدالتی حکم پر22روز بعد مقامی پولیس نے بچی کو عدالت میں پیش کردیا جہاں پردرخواست ماں نے کہا کہ اسے بچی مل گئی تواسے سب کچھ مل گیا ہے ،وہ ملزمہ ثمینہ کو بھی معاف کرتی ہے جس پر فاضل جج نے بچی ماں کے حوالے کرتے ہوئے دائر درخواست نمٹا دی ہے ۔

مزید : لاہور