مولانا آصف جلالی کا داتا دربار کے باہر دھرنا ختم کرنے سے انکار

مولانا آصف جلالی کا داتا دربار کے باہر دھرنا ختم کرنے سے انکار

لا ہور ( کرائم رپورٹر،ایجوکیشن رپورٹر)تحریک لبیک یارسول اللہؐ کے سربراہ ڈاکٹر آصف اشرف جلالی نے روزنامہ پاکستان سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ آسیہ بی بی کے کیس کا فیصلہ آنے سے ایک روز قبل ممکنہ فیصلے کے تناظر میں تحریک لبیک یارسول اللہ نے داتا دربار کے باہر دھرنے کا آغاز کر دیا تھا۔یہ افسوس کا مقام ہے کہ سپریم کورٹ نے توہین رسالت کیس میں حق منصفی ادا نہیں کیا اور توہین رسالت کی مجرمہ آ سیہ کو بری کر دیا جس کے بعد تمام عاشقان رسول سراپا احتجاج ہیں اور جب تک سپریم کورٹ اپنا فیصلہ واپس نہیں لے گی اور آسیہ کو پھانسی کی سزا نہیں سنائے گی اس وقت تک تحریک لبیک یا رسول اللہ کا احتجاج جاری رہے گا۔انہوں نے کہا کہ علامہ خادم رضوی کے دھرنا ختم کرنے کے حوالے سے حکومت کے ساتھ مذاکرات ہوئے ہیں لیکن حکومت نے ہمارے ساتھ کوئی رابطہ نہیں کیا۔ہم اپنے مشن سے نہیں ہٹیں گے اور حکومت کے ساتھ کوئی رابطہ نہیں کریں گے۔انہوں نے کہا کہ آسیہ ملعونہ کی پھانسی تک ہم اپنا دھرنا جاری رکھیں گے۔

آصف جلالی

مزید : صفحہ اول