ملک بھر میں ڈائریکٹرز حاجی کیمپس کے بڑے پیمانے پر تبادلے

ملک بھر میں ڈائریکٹرز حاجی کیمپس کے بڑے پیمانے پر تبادلے

لاہور(ڈویلپمنٹ سیل)وزارت مذہبی امور کے زیر اہتمام ملک بھر میں چلنے والے حج ڈائریکٹو ریٹ میں ذمہ داری ادا کرنے والے ڈائریکٹرز حاجی کیمپ کے دور دراز اسٹیشن میں بڑے پیمانے پر تبادلے،اسلام آباد حاجی کیمپ کے ڈائریکٹر قاضی سمیع الرحمن کو تبدیل کر کے ڈائریکٹر حاجی کیمپ کراچی، ڈائریکٹر لاہور سعید احمد ملک کو تبدیل کر کے حاجی کیمپ کوئٹہ ،ڈپٹی ڈائریکٹر ملتان حاجی کیمپ ریحان کھوکھر کو تبدیل کر کے ڈائریکٹر حاجی کیمپ لاہور ،کراچی حاجی کیمپ کے ڈائریکٹر سید امتیاز علی شاہ کو تبدیل کر کے ڈائریکٹر حاجی کیمپ ملتان ،کوئٹہ حاجی کیمپ کے ڈائریکٹر حسیب احمد صدیقی کو تبدیل کر کے ڈائریکٹر اسلام آباد حاجی کیمپ تعینات کر دیا گیا ہے،سیکشن آفیسر وزارت مذہبی امور جمشید اللہ خان کی طرف سے جاری کیے گئے سرکلر کے مطابق پشاور کے سوا ملک بھر کے حاجی کیمپوں میں ذمہ داری ادا کرنے والے ڈائریکٹرز کو تبدیل کر دیا گیا ہے،پشاور کے ڈائریکٹر شکیل سیٹھی کو اس لیے تبدیل نہیں کیا گیا وہ2019ء میں ریٹائر ہو رہے ہیں نئے مقامات پر فوری ذمہ داری سنبھالنے کی ہدایت کی گئی ہے ،دلچسپ امر یہ ہے ڈائریکٹر حاجی کیمپ کی سیٹ19ویں گریڈ کی ہے اسلام آباد اور لاہور میں 18ویں گریڈ کے ڈپٹی ڈائریکٹرکوڈائریکٹر کی سیٹ پر لگا دیا گیا ہے یہ اچانک اور غیر متوقع تبادلے اس وقت کیے گئے ہیں جب حج2018ء کے کامیاب حج اپریشن کے بعد تمام حاجی کیمپوں کے ڈائریکٹرز کی ستائش کی جا رہی تھی،ڈائریکٹر اور عملہ حج2019ء کے لیے تجاویز کے حصول کے لیے مشاورتی حج ورکشاپس کا کامیابی سے انعقاد کروا رہا ہے ،لاہور،ملتان،کراچی میں ورکشاپ ہو چکی ہیں،اسلام آباد،پشاوراور کوئٹہ میں ہونا باقی ہیں،وزارت مذہبی امور کی طرف سے اچانک تبادلوں سے نئی بحث چھڑگئی ہے تبادلے اچھے کام کی سزا ہیںیا ستائش ہیں البتہ18ویں گریڈ کے ڈپٹی ڈائریکٹر ریحان کھوکھر نے ملتان سے لاہور حاجی کیمپ میں ڈائریکٹر اور کوئٹہ کے ڈپٹی ڈائریکٹر حسیب صدیقی جنہیں ڈائریکٹر حاجی کیمپ اسلام آباد تعینات کیا گیا ہے وہ خوش ہیں،اچانک تبادلوں کے حوالے سے وزارت مذہبی امور کے ذرائع نے روزنامہ پاکستان کو بتایا کہ ڈائریکٹرز اور ڈپٹی ڈائریکٹرز کے تبادلے اس لیے کیے گئے ہیں کہ وہ افسر سالہا سال سے ایک اسٹیشن پر ذمہ داری ادا کر رہے تھے،وزارت مذہبی امور اور دیگر شعبوں میں ایسے افراد کے تبادلے متوقع ہیں جو کئی کئی سال سے ایک سیٹ پر کام کر رہے ہیں۔

حاجی کیمپ تبادلے

مزید : صفحہ آخر