حکومت نے صوبے میں 20سیاحتی مقامات دریافت کیے ہیں : محمد عاطف خان

حکومت نے صوبے میں 20سیاحتی مقامات دریافت کیے ہیں : محمد عاطف خان

پشاور( سٹاف رپورٹر)خیبر پختونخوا کے سینئر وزیر برائے سیاحت کھیل وامورنوجوانان امور عاطف خان نے کہا ہے کہ حکومت نے صوبے میں 20سیاحتی مقامات دریافت کیے ہیں جن میں سے 10 مقامات کو انفراسٹرکچر سمیت تمام سہولیات دے کر سیاحوں کی توجہ کا مرکز بنا یا جائیگا جبکہ 5 مقامات کے لئے ماسٹر پلان بھی تیار کیا گیا ہے۔ اسلام آباد میں ورلڈ بینک کے تعاون سے سیاحت کو فروغ دینے سے متعلق منعقدہ ورکشاپ سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ خیبر پختونخوا میں سیاحت کو فروغ دینے کے لئے بنائی گئی ٹاسک فورس 7نومبر کو وزیراعظم عمران خان سے ملاقات کرکے صوبے میں سیاحت کے حوالے سے آگاہ کرے گی۔ سینئر وزیر نے کہا کہ پشاور میں موجود تاریخی قلعہ بالا حصار کو کھولنے کے لئے کور کمانڈر پشاور سے بات چیت جاری ہے اوربہت جلدان کو اعتماد میں لے کر سیاحوں کے لئے کھول دیا جائے گا انہوں نے کہا کہ ماضی میں سرکاری افسروں کے زیر استعمال 35 سرکاری ریسٹ ہاوسز عوام کے لئے کھول دیے گئے ہیں سینئر وزیر نے کہا کہ سوات میں کبل کے مقام پر قائم گالف کلب بہت جلد سیاحوں کے لئے کھول دیا جائے گا اسکے علاوہ ٹورزم پو لیس فورس کا قیام بھی عمل میں لایا جا رہا ہے جو سیاحوں کی معاونت اور حفاظت کے لئے چوکس رہے گی انہوں نے مزید کہا کہ صوبے میں سیاحت کو فروغ دینے سے نہ صرف آمدن بڑ ھے گی بلکہ لوگوں کو مقامی سطح پر روز گار کے مواقع بھی فراہم ہوں گے سینئر وزیر نے کہا کہ کمراٹ خیبر پختون خوا کا ایک پر فضا مقام ہے جو حال ہی میں دریافت ہوا ہے جہاں پر ہوٹلوں کی دستیابی کے لئے پرائیویٹ سیکٹر سے بات چیت جاری ہے۔ورکشاپ میں سیاحتی ماہرین کے علاوہ ٹوور آپریٹرز اور ورلڈ بینک کے کنٹری ڈائریکٹر نے بھی شرکت کی۔

مزید : کراچی صفحہ اول