” کیلوں کی ریڑھی والے بچے کا نقصان میں اپنی جیب سے ادا کروں گا “ ایک پولیس والا پورے پاکستان پر بازی لے گیا

” کیلوں کی ریڑھی والے بچے کا نقصان میں اپنی جیب سے ادا کروں گا “ ایک پولیس ...
” کیلوں کی ریڑھی والے بچے کا نقصان میں اپنی جیب سے ادا کروں گا “ ایک پولیس والا پورے پاکستان پر بازی لے گیا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو تیزی کے ساتھ وائرل ہو رہی ہے جس میں دیکھا جا سکتاہے کہ لوگوں کا بڑا ہجوم ایک بچے کی کیلوں کی ریڑھی پر دھاوا بول دیا اور کیلے اٹھا کر فرار ہو گئے تاہم اب ایک نوجوان پولیس افسرا میدان میں آ گئے ہیں اور انہوں نے اس بچے کا تمام نقصان اپنی جیب سے ادا کرنے کا اعلان کر دیاہے ۔

تفصیلات کے مطابق کیلوں کی ریڑھی پر جس وقت لوگ دھاوا بول رہے تھے تو معصوم بچہ اپنے نقصان کو بچانے کیلئے ریڑھی کو بھگانے کی مسلسل کوشش کر تاہو انظر آ رہاہے تو کبھی وہ اپنی چھڑی کا سہارا لے کر کیلوں کو بچانے کی کوشش کر رہا ہے ۔ ویڈیو میں دیکھا جا سکتاہے کہ دو برقعہ پوش خواتین نے بھی موقع سے فائدہ اٹھاکر کیلے اٹھا لیے۔یہ واقع شیخو پورہ میں پیش آیا اور اس کی ویڈیو تیزی کے ساتھ سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی تو وفاقی وزیر اطلاعات نے بھی پنجاب حکومت سے درخواست کی کہ وہ اس بچے کو تلاش کریں ۔

تاہم اب انسپکٹر پنجاب پولیس فیصل شریف نے فراخ دلی کا مظاہرہ کرتے ہوئے پورے پاکستان پر بازی مار لی ہے اور اعلان کیا ہے کہ وہ شیخوپورہ میں جس مزدور بچے کے کیلے لوٹے گئے وہ اس بچے کا نقصان اپنی جیب سے ادا کریں گے جبکہ وہ بچے کو تعلیم کے زیور سے آراستہ کرنے کیلئے اس کی تعلیم کا تمام خرچ بھی خود برداشت کریں گے ۔

تاہم اب ایک اور ویڈوی بھی سوشل میڈیا پر گردش کر رہی ہے جس میں وہی ریڑھی والا بچہ کہہ رہاہے کہ ایک شخص نے اس سے سارے کیلے 3500 روپے میں خرید لیے تھے اور خریدار نے کیلے دھرنے میں شریک مظاہرین میں تقسیم کرنے کا کہا تھا۔

ویڈیو دیکھیں:

مزید : ڈیلی بائیٹس