مظاہرہ ختم ہوتے ہی علامہ خادم حسین رضوی کو زور دار جھٹکا لگ گیا

مظاہرہ ختم ہوتے ہی علامہ خادم حسین رضوی کو زور دار جھٹکا لگ گیا
مظاہرہ ختم ہوتے ہی علامہ خادم حسین رضوی کو زور دار جھٹکا لگ گیا

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)مظاہروں اور قانون شکنی پر تحریک لبیک کے سربراہ علامہ خادم حسین رضوی اور افضل قادری سمیت 500 نامعلوم افراد پر مقدمات درج کر لیے گئے۔مقدمات میں مذہبی جماعتوں کے 20 کارکنان سمیت 100 سے زائد نامعلوم افراد نامزد کئے گئے ہیں۔پولیس حکام کے مطابق لاہور میں سڑکیں بلاک کرنے اور ہنگامہ آرائی کے الزام میں 11 ایف آئی آرز درج کی گئیں۔

تفصیلات کے مطابق ایف آئی آر میں درج ہے کہ گاڑیوں کو نقصان پہنچانے سے روکنے پر مظاہرین نے سیکیورٹی اہلکاروں پرحملہ کیا، مشتعل مظاہرین نے کار سرکار میں مداخلت، سرکاری و نجی املاک کو نقصان پہنچایا۔ایف آئی آر کے مطابق دہشتگردی،پولیس اہلکاروں کو زخمی کرنے اوردفعہ 144 کی خلاف ورزی پر مقدمات درج کیے گئے ہیں ،ترامڑی چوک پرمظاہرے میں توڑ پھوڑ کرنے والوں کیخلاف 2 مقدمات درج کئے گئے ہیں۔پولیس کے مطابق افضل قادری اور خادم رضوی کی ایف آئی آر سیل کردی گئیں ہیں۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد