سندھ حکومت نے تعلیم اور صحت کے شعبہ میں انقلابی کام کئے ہیں: سعید غنی

سندھ حکومت نے تعلیم اور صحت کے شعبہ میں انقلابی کام کئے ہیں: سعید غنی

  



کراچی (اسٹاف رپورٹر) وزیر اطلاعات و محنت سندھ سعید غنی نے کہا ہے کہ ہم پر اکثر تنقید کی جاتی ہے کہ ہم نے تعلیم اور صحت کے شعبہ میں کوئی کام نہیں کیا ہے لیکن ہمارے مثبت کاموں کو فراموش کیا جاتا رہا ہے۔ سعید غنی نے کہا کہ تعلیم اور صحت میں سندھ حکومت نے گذشتہ چند برسوں میں جو انقلابی کام کئے ہیں شاید میڈیا میں اس کو اتنا اچھا رسپانس نہیں ملا جتنا وہ ہم پر تنقید کرنے میں کرتے ہیں۔ سندھ مدرستہ السلام یونیورسٹی میں گذشتہ 10 سے 11 سال کے دوران اتنے بڑے پیمانے پر تبدیلیاں آئی ہیں کہ آج وہ اس ملک کے بہترین درسگاہوں میں شمار کی جاتی ہے۔کالجز میں داخلے کیپ کے ذریعے ہوتے ہیں اس کے طلبہ اپنے پسند کے کالج کے لئے اپلائی کرتے ہیں۔آزادی مارچ کے مظاہرین پرامن ہیں انہوں نے کوئی ایسی بات نہیں کی جو قانون کے دائرے میں نہ ہوں۔ عمران خان نے ٹیکس نہ دینے پیسے ہنڈی کے ذریعے بھیجنے، گیس اور بجلی کے بل ادا نہ کرنے اور سول نافرمانی کی بات کی تھی۔کچھ وفاقی وزراء اور مشیران ان مظاہرین کو مشتعل کرنے کے لئے اس طرح کے بیانات دے رہے ہیں کہ وہ مشتعل ہوں۔ فاطمہ بھٹو کے لئے عزت ہے، لاڑکانہ ان کا گھر ہے اور سیاست بھی ان کا حق ہے۔املاک میں وہ ضرور بھٹو کی وارث ہیں لیکن بھٹو کا سیاسی وارث بلاول بھٹو ہیں۔جناح اسپتال میں بھی ویکسین کم ہوسکتی ہے لیکن یہ نہیں کہ کتے کے کاٹنے کی ویکسین نہ ہو۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے ہفتہ کے روز ایکسپو سینٹر کراچی میں سندھ مدرستہ اسلام یونیورسٹی کے کانوکیشن سے خطاب اور بعد ازاں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پرچانسلر سندھ مدرستہ اسلام،  وائس چانسلرپروفیسر محمد علی شیخ اور دیگر بھی شریک تھے۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی وزیر سعید غنی نے کہا کہ میں یونیورسٹی کے ان تمام طلبہ و طالبات کو مبارکباد پیش کرتا ہوں، جنہوں نے اپنی تعلیم مکمل کی ہے اور خصوص طور پر ان طلبہ و طالبات کو جنہوں نے پوزیشن اور گولڈ میڈل حاصل کئے ہیں۔ سعید غنی نے کہا کہ کسی بھی اچھی یونیورسٹی میں تعلیم حاصل کرنا ایک اعزاز کی بات ہے لیکن سندھ مدرستہ اسلام میں تعلیم حاصل کرنا اس سے بھی بڑے اعزاز کی بات ہے کہ یہاں بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح نے بھی تعلیم حاصل کی ہے اور یہاں کا طالبعلم جہاں جہاں بھی اپنی تعلیم کا ذکر کرے گا وہاں آپ کے لئے یہ فخر کی بات ہوگی کہ آپ نے اس درسگاہ سے تعلیم حاصل کی ہے جہاں ہمارے قائد نے تعلیم حاصل کی ہے۔ سعید غنی نے کہا کہ میں وائس چانسلر محمد علی شیخ کو بھی مبارکباد پیش کرتا ہوں کہ انہوں نے جب سے اس منصب کو سنبھالا ہے کافی کاوشیں کی ہیں کہ ادارے کو بہتر سے بہتر بنایا جاسکے۔ انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت نے اس کالج کو یونیورسٹی کا درجہ دیا ہے۔ سعید غنی نے کہا کہ ہم پر اکثر تنقید کی جاتی ہے کہ ہم نے تعلیم اور صحت کے شعبہ میں کوئی کام نہیں کیا ہے لیکن ہمارے مثبت کاموں کو فراموش کیا جاتا رہا ہے۔ سعید غنی نے کہا کہ تعلیم اور صحت میں سندھ حکومت نے گذشتہ چند برسوں میں جو انقلابی کام کئے ہیں شاید میڈیا میں اس کو اتنا اچھا رسپانس نہیں ملا جتنا وہ ہم پر تنقید کرنے میں کرتے ہیں۔ سعید غنی نے کہا کہ سندھ مدرستہ اسلام یونیورسٹی میں گذشتہ 10 سے 11 سال کے دوران اتنے بڑے پیمانے پر تبدیلیاں آئی ہیں کہ آج وہ اس ملک کے بہترین درسگاہوں میں شمار کی جاتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہماری دعا ہے کہ اس ملک کے تمام تعلیمی ادارے جو گذشتہ کئی دہائیوں سے کسی نہ کسی سبب سے تنزلی کا شکار رہے ہیں وہ ترقی کریں اور اس ملک میں تعلیم کا نظام مزید بہتر ہو۔انہوں نے کہا کہ ہم اس بات کو اچھی طرح سمجھتے ہیں کہ جس ملک میں تعلیم کا نظام بہتر ہوگا وہ ملک ترقی کرے گا اور ہماری بھرپور کوشش ہے کہ اس ملک اور بالخصوص سندھ بھر کے تمام تعلیمی اداروں کو مزید فعال بنائیں اور اس کے لئے سندھ حکومت اپنے تمام وسائل کو بروئے کار لارہی ہے۔

مزید : صفحہ اول