آج مولانا فضل الرحمان نے خطاب میں تاخیر کیوں کی اور وہ کس طرح کا لہجہ اپنائیں گے ؟حامد میر نے اہم بات بتا دی

آج مولانا فضل الرحمان نے خطاب میں تاخیر کیوں کی اور وہ کس طرح کا لہجہ اپنائیں ...
آج مولانا فضل الرحمان نے خطاب میں تاخیر کیوں کی اور وہ کس طرح کا لہجہ اپنائیں گے ؟حامد میر نے اہم بات بتا دی

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )معروف اینکر پرسن و سینئر صحافی حامد میر نے کہا ہے کہ حکومت اور اپوزیشن کوشش کر ے کہ تمام معاملات آئین کے اندر رہ کر حل کرے کیونکہ دونوں اطراف سے جو بھی آئین سے باہر جائے گا وہ اپنا نقصان کرے گا ۔نجی نیوز چینل جیو نیوز کے پروگرام ’نیا پاکستان ‘میں گفتگو کرتے ہوئے ان کاکہنا تھا کہ مولانا فضل الرحمان کا سٹیج جہاں آج موجود ہے ،اب وہ تھوڑا آگے جائے گا اور پھر وہ تھوڑا اور آگے جائے گا ۔انہوں نے بتا یا کہ اپوزیشن میں جو نکات زیر غور ہیں اس حوالے سے جے یو آئی ف کے علاوہ دیگر جماعتیں مشاورت کر رہی ہیں ،اس لیے آج مولانا فضل الرحمان کا خطاب بھی کچھ گھنٹوں کی تاخیر سے 10بجے تک ہو گا ورنہ عام طور پر وہ چھ بجے خطاب کرتے ہیں ،آج کے خطاب میں مولا نا فضل الرحمان سخت موقف بیان کریں گے ۔حامد میر نے مزید کہا کہ میری ذاتی رائے ہے کہ حکومت اپوزیشن کو تھوڑی سپیس دے اور حکومتی مذاکراتی ٹیم اپوزیشن سے رابطے میں رہے ،حکومت اور اپوزیشن ایک دوسرے کو فیس سیونگ دیں کیونکہ نہ تو 2014میں استعفیٰ دیا گیا تھا نہ ہی اب ایسا ہو گا ۔

مزید : قومی