آزادی مارچ سےمتعلق فیصلہ رہبرکمیٹی کی مشاورت سے ہوگا،اداروں سےمتعلق بیان کامولانااوران کی جماعت نےجواب دےدیا:وزیراعلیٰ سندھ

آزادی مارچ سےمتعلق فیصلہ رہبرکمیٹی کی مشاورت سے ہوگا،اداروں سےمتعلق بیان ...
آزادی مارچ سےمتعلق فیصلہ رہبرکمیٹی کی مشاورت سے ہوگا،اداروں سےمتعلق بیان کامولانااوران کی جماعت نےجواب دےدیا:وزیراعلیٰ سندھ

  



حیدرآباد(این این آئی)وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ اداروں سے متعلق بیان کا مولانا فضل الرحمن اور ان کی جماعت نے جواب دے دیا ہے، پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے رہبر کمیٹی میں پیپلزپارٹی کے نمائندے نامزدکئے ہیں، آزادی مارچ سے متعلق جو ہوگا وہ رہبر کمیٹی کی مشاورت سے ہوگا، اسلام آباد کی صورتحال پر چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کی ہدایت پر فیصلہ کریں گے۔

وزیر اعلیٰ ہاؤس واہڑ سہون میں میڈیاسے گفتگو کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ سید مراد علی شاہ نے کہا کہ پی ٹی آئی کی ناکام حکومت نے لوگوں سے روزگار چھینا ہے اور مہنگائی کا طوفان برپا کردیا ہے، پی ٹی آئی حکومت کی ناکام پالیسیوں کے باعث ہم صوبے کے لوگوں کوملازمتیں نہیں دے سکے، وفاقی حکومت نے صوبوں کو ان کے حصے کے فنڈز نہیں دیئے،پی ٹی آئی کی حکومت سے جلد چھٹکارا ملے گا اور حالات بہتر ہوجائیں گے۔مولانافضل الرحمن کی طرف سے کنٹینر پر اداروں سے متعلق بیان کے حوالے سے سوال پر وزیر اعلیٰ سندھ نے کہا کہ اس کا جواب مولانا صاحب اور ان کی جماعت نے دے دیا ہے، کشمیر سے متعلق سوال پر انہوں نے کہا کہ کشمیر کے معاملے پر وزیر اعظم نے ایک تقریر کے علاوہ کیا کیا ہے؟کشمیر سے متعلق اجلاس میں وزیر اعظم عمران خان اجلاس سے اٹھ کرکہتے ہیں میں کیا کروں مجھے بتاؤ؟وفاقی حکومت اپنی ناکامیاں کسی اور کے پلڑے میں ڈال رہی ہے۔ ایک سوال پر انہوں نے کہا کہ ضمانت کی درخواست سابق صدرآصف علی زرداری خود کرنا چاہیں گے تو کریں گے،زرداری صاحب کہتے ہیں مجھے ان کی جیلوں سے ڈر نہیں بھلے وہ اپنی طاقت آزمالیں۔

مزید : علاقائی /سندھ /حیدرآباد