حکومت اور ٹی ایل پی کے درمیان معاہدہ طے پانا خوش آئند، اعجاز چودھری

 حکومت اور ٹی ایل پی کے درمیان معاہدہ طے پانا خوش آئند، اعجاز چودھری

  

لاہور (نمائندہ خصوصی) پاکستان تحریک انصاف سنٹرل پنجاب کے صدر سینیٹر اعجازاحمد چوہدری نے کہاہے کہ حکومت اور ٹی ایل پی کے درمیان معاہدہ طے پانا خوش آئند ہے۔ملکی امن و سلامتی سب کے مفاد میں ہے، ملک اس وقت کسی انتشار کی صورتحال کا متحمل نہیں ہو سکتا۔  علماء  کرام نے حکومت اور ٹی ایل پی کے معاہدے میں کلیدی کردار ادا کیا جس پر قوم انکی مشکورہے، حکومت نے صبر وتحمل کامظاہرہ کیا جو کہ  قابل تحسین ہے۔انہوں نے کہاکہ وزیراعظم عمران خان سچے عاشق رسولؐ ہیں انہوں نے اقوام متحد ہ سمیت عالمی فورم پر گستاخانہ مواد کی تشہیر کی شدید الفاظ میں مذمت کی۔عمران خان نے عالمی سطح پر جس طرح آواز بلند کی اس کی ملکی تاریخ میں مثال نہیں ملتی۔

اْ ن کا کہنا تھا کہ رسول کریم ؐکی شان میں توہین کوئی مسلمان برداشت نہیں کرسکتا ان کی ذات اقدس کی حرمت مسلمانوں کے لئے بہت اہم ہے، توہین رسالت? سے مسلمانوں کے دلوں کو تکلیف پہنچتی ہے،عالمی برادری اسلاموفوبیا کی بڑھتی ہوئی لہر اور اقلیتوں بالخصو ص مسلمانوں کے خلاف حملوں کو روکنے کے لیے اپنا کردار ادا کرے۔ وہ اتوار کے روز پارٹی آفس میں ملاقات کے لیے آئے ہوئے پارٹی رہنماؤں سے گفتگوکررہے تھے۔ ان کا مزیدکہنا تھا کہ بھارت پاکستان کو عدم استحکام کا شکار کرنے کی سازش کر رہاہے مگر ہر بار منہ کی کھانا پڑی،مودی اور بھارت خطے کی سلامتی کے لیے خطرہ بن چکے ہیں،عالمی دہشت گر دمودی کشمیریوں کا قاتل ہے، اقوام متحدہ کشمیریوں کو اْن کا حق خودارادیت دینے سے قاصر ہے اورخاموش تماشائی کا کردار ادا کررہا ہے، بھارت نے کشمیر میں ظلم کے پہاڑ ڈھا دئیے ہیں مگر کشمیریوں کے حوصلے پشت نہ کرسکا،عالمی عدالت انصاف سے کشمیریوں کو بڑی توقعات وابستہ ہیں کہ عالمی عدالت انصاف مظلوم کشمیریوں کو اْن کا بنیادی حق خودارادیت دینے کے لئے اپنا کردار ادا کرے۔ انشاء  اللہ وہ وقت دور نہیں جب کشمیریوں کو حق آزادی نصیب ہوگی۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -