سزائے موت کی اپیلوں پرسماعت، تمام ملزم بری کرنیکا حکم

سزائے موت کی اپیلوں پرسماعت، تمام ملزم بری کرنیکا حکم

  

ملتان(خصو صی  رپورٹر)چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ کے حکم پر سزائے موت پانے والے مجرموں کی اپیلوں کی سماعت کیلئے  جسٹس صراقت علی خان اور جسٹس شہرام سرور چو ہدری پر مشتمل سپیشل ڈویژن بنچ نے گزشتہ روز دس اپیلوں کی سماعت کی۔ تمام اپیلیں منظور کرتے ہوئے سزائے موت کے مجرموں کو بری کردیا۔تاہم ایک ملزم  بشیراحمد کی سزا میں کمی کے خلاف اپیل (بقیہ نمبر1صفحہ6پر)

عدم پیروی میں خارج کردی۔۔اسی طرح ڈاکٹر اختر حسین کی انسداد دہشت گردی کی عدالت سے بریت کے خلاف اپیل بھی خارج کردی۔ ایک اور ملزم ذوالفقارعلی کی بریت کے خلاف غلام اکبر کی اپیل مسترد کردی۔فاضل سپیشل بنچ نے  د  اپیلوں میں  شک کا فائدہ دیتے ہوئے تمام ملزمان کو بری کردیا۔ تمام اپیلیں 2018، 2019 اور 2020 میں دائر کی گئیں  اسی طرح بری ہونے والوں میں ڈیرہ غازی خان اور ملتان ڈویژن کے محمد ظفر، عمران تنویر،محمد شعیب۔محمد خالد۔کاشف رضا۔ ساجد عرف کالی، خلیل احمد،اللہ بخش۔محمود اختر، آصف ندیم۔اور غلام اکبر شامل ہیں   مجرموں کی جانب سے شیخ جمشید حیات۔اللہ بخش خان کلاچی۔ملک شفیق کالرو۔اورنگ زیب گھمن۔ سید بدر رضا گیلانی۔ملک محمد سلیم۔محمد عثمان شریف کھوسہ۔ملک محمد لطیف کھوکھر۔پرنس ریحان افتخار شیخ۔ مشتاق حسین بڈانی نے اپیلوں کی پیروی کی۔ 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -