محکمہ جنگلی حیات نے آبی پرندوں کی بقاء و تحفظ کیلئے اقدامات تیز کر دئیے

محکمہ جنگلی حیات نے آبی پرندوں کی بقاء و تحفظ کیلئے اقدامات تیز کر دئیے

  

لاہور (لیڈی رپورٹر) سیکرٹری جنگلات، جنگلی حیات و ماہی پروری پنجاب شاہد زمان نے ضلع اٹک کادورہ کیا۔ڈائریکٹر جنرل ماہی پروری سکندرحیات اور چیف کنزرویٹرآف فاریسٹ راولپنڈی بھی ان کے ہمراہ تھے۔ ڈپٹی ڈائریکٹر وائلڈلائف راولپنڈی ریجن عارفہ بتول اور اسسٹنٹ ڈ ائریکٹر وائلڈلائف ضلع اٹک احسان احمد راجہ نے معزز مہمان کو ضلع اٹک میں غیرقانونی شکارکی روک تھام، محفوظ علاقہ جات کی کڑی نگرانی اور جنگلی حیات کی بقاو تحفظ کے تناظر میں دیگرتمام امور پر تفصیلی بریف کیا۔ بعد ازاں انہوں نے دریائے سندھ اور غازی بروتھا جنکشن کے مقام پر مہمان آبی پرندوں کی آماجگاہ کا معائنہ کیا اور آبی پرندوں کے اس پرکشش مسکن پر مہمان پرندوں کو غیرقانونی شکار سے محفوظ بنانے اور بقا و تحفظ کے تمام مضمرات کا تفصیلی جائزہ لیا گیا اور اس سائٹ کو محفوظ ڈکلیئر کرنے کیلئے اس کی باؤنڈری کا تعین و دیگر امور پر مکمل غور وخوض کیاگیا۔یادر ہے کہ دریائے سندھ اور غازی بروتھا جنکشن راولپنڈی ریجن میں آبی پرندوں کاایک پرکشش مسکن ہے۔ 

بریفنگ کے دوران معزز مہمان کو وائلڈلائف ایکٹ کی ایسی دفعات اور شقوں کی بھی نشاندہی کی گئی جنہیں مزید موثر اور بہتر بنایاجاسکتا ہے جس پر سیکرٹری جنگلات نے ہدایت کی کہ معاملہ پر مختلف گروپس میں سیر حاصل بحث کی جائے تاکہ ان معاملات کو ایک مشاورتی ورکشاپ کاانعقاد کرکے حل کیاجائے۔مزیدبرآں دورہ کے دوران سیکرٹری جنگلات نے ہٹیاں اور گڑیالہ فش ہیچری پر دریائے ہرو کے مقام پر مہاشیر فش سیڈ سٹاکنگ کی اور اس عمل میں محکمہ جنگلی حیات کو بھی شریک عمل کیا۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -