میلسی، قتل مقدمہ میں ملزم کو شک  کا فائدہ دیکر بری کرنے کا حکم

میلسی، قتل مقدمہ میں ملزم کو شک  کا فائدہ دیکر بری کرنے کا حکم

  

میلسی (نامہ نگار)ایڈیشنل سیشن جج میلسی ماڈل   کورٹ طاہر خلیل نے بھائی کے ہاتھوں بھائی کے قتل  کے مقدمے میں استغاثے  کی جانب سے الزام ثابت نہ ہونے پر ملزم کو شک کا فائدہ دیتے ہوئے بری (بقیہ نمبر36صفحہ6پر)

کرنے کا حکم سنایا۔استغاثہ کے مطابق  اڈہ آرے واہن کے قریب 70 سالہ محمد شفیع کے بیٹے مٹھائی فروش شیراز احمد موٹر سائیکل سوار کو  جودوسرے موٹر سایکل پر سوار  اپنے بھائی فراز احمدکے ہمراہ گھر لوٹ رہاتھا عقب سے نامعلوم شخص نے فائر نگ کر کے زخمی کیا جسے بہاول وکٹوریہ ہسپتال بہاول پور لے جایا گیا جہاں وہ جاں بحق ہو گیا تھانہ میراں پور میلسی نے قتل عمد کا مقدمہ درج کیا اس دوران شیراز کی دوکان پر کام کرنے والے علی حمزہ نے پولیس کو درخواست میں انکشاف کیاکہ اس نے فراز کو سگے بھائی پر فائرنگ کرتے ہوئے دیکھا جس پر ملزم کو صحیح گنہگار قرار دے کر پولیس نے چالان عدالت میں پیش کیا جہاں علی حمزہ نے بیان بدل دیا جس پر ملزم کو 265 کے کے تحت عدالت نے بری کر نے کا حکم سنایا #

مزید :

ملتان صفحہ آخر -