لانگ مارچ کے آغاز پر ٹرک سے گر کر جاں بحق ہونے والےپارٹی کارکن کی بیٹی نے بیان جاری کر دیا ، بیوہ کی مدد کی اپیل پر مریم نواز متحرک

لانگ مارچ کے آغاز پر ٹرک سے گر کر جاں بحق ہونے والےپارٹی کارکن کی بیٹی نے ...
لانگ مارچ کے آغاز پر ٹرک سے گر کر جاں بحق ہونے والےپارٹی کارکن کی بیٹی نے بیان جاری کر دیا ، بیوہ کی مدد کی اپیل پر مریم نواز متحرک

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )جمعہ کے روز جب عمران خان کے مارچ کا آغاز لاہور کے علاقے لبرٹی سے ہوا تو پہلے ہی دن ایک شخص کی جان چلی گئی جو کہ ٹرک سے گر نے سے زخمی ہوا اور ہسپتال میں دم توڑ گیا ، حسن بلوچ کی تدفین کر دی گئی ہے اور بیوہ کی جانب سے شہبازشریف سے مددکی اپیل کی گئی ہے ۔

تفصیلات کے مطابق ٹرک سے گر کر جاں بحق ہونے والے حسن بلوچ کی بیوہ اور ایک جوان بیٹی اندرون لاہور لوہاری گیٹ میں کرائے کے مکان میں بے بسی کی تصویر بنے بیٹھے ہیں ، بیٹی نے بتایا کہ ” میرا باپ لانگ مارچ میں گیا تھا ، کنٹینر پر چڑھے تھے درخت لگنے سے نیچے گرے اور جب وہ نیچے گر ے تو کسی نے بھی نہیں اٹھایا بلکہ سب تماشا دیکھتے رہے ، کسی نے میرے باپ کو ہاتھ نہیں لگایا “۔

49 سالہ حسن بلوچ کو سپرد خاک کر دیا گیاہے اور بیوہ نے وزیراعظم شہبازشریف سے مدد کی اپیل کر دی ہے ، ان کا شوہر محنت مزدوری کر کے گھر کا خرچ اٹھایا کرتا تھا ۔

بیوہ اور بیٹی کی آواز ٹویٹر کے ذریعے جب مریم نواز تک پہنچی تو انہوں نے فوری طور پر عطا تار ڑ کو ہدایت کی کہ وہ ان کی درخواست کو وزیراعظم شہبازشریف تک پہنچائیں ۔

مزید :

قومی -