52 سالہ ٹیچر نے 20 برس کی طالبہ سے محبت کی شادی کرلی

52 سالہ ٹیچر نے 20 برس کی طالبہ سے محبت کی شادی کرلی
52 سالہ ٹیچر نے 20 برس کی طالبہ سے محبت کی شادی کرلی

  

 کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان میں ایک52سالہ ٹیچر اور اس کی 20سالہ سٹوڈنٹ نے ایک دوسرے کی محبت میں گرفتار ہو کر شادی کر لی۔ انڈیا ٹائمز کے مطابق زویا نور نامی یہ لڑکی بی کام کی طالبہ تھی۔اسے اپنے ٹیچر ساجد علی سے محبت ہو گئی جس کا اس نے ساجد علی سے اظہار بھی کر دیا تاہم ابتدائی طور پر ٹیچر نے اس کی پیشکش ٹھکرا دی۔ تاہم ایک ہفتے بعد ٹیچر نے خود بھی لڑکی کے ساتھ محبت کا اظہار کر دیا اور دونوں نے شادی کر لی۔

ایک یوٹیوبر کو انٹرویو دیتے ہوئے زویا نور نے بتایا کہ ”جب میں نے ساجد علی کو شادی کی پیشکش کی تو اس نے یہ کہتے ہوئے میری پیشکش ٹھکرا دی کہ ہماری عمروں میں 32سال کا فرق ہے چنانچہ ہماری شادی نہیں ہو سکتی۔ “ ساجد علی نے بتایا کہ ایک بار جب اس نے طالبہ کو انکار کر دیاتو اس کے بعد وہ اس کی طرف راغب ہوتا چلا گیا اور اگلے ایک ہفتے میں اسے بھی زویا سے محبت ہو گئی۔

ساجد اور زویا نے بتایا کہ ان کی شادی پر دونوں طرف کے رشتہ داروں کافی مسائل پیدا کرنے کی کوشش کی تاہم وہ ثابت قدم رہے اور اپنے فیصلے سے پیچھے نہیں ہٹے۔ زویا کا کہنا تھا کہ ”مجھے ساجد علی کی شخصیت پسند آئی تھی، وہ جس طریقے سے پڑھاتے تھے مجھے ان کا وہ انداز اچھا لگا تھا جس کی وجہ سے میں ان کی محبت میں گرفتار ہوئی۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -