سوچی سمجھی سازش کے تحت ملکی حالات خراب کئے جارہے ہیں،ڈاکٹر وسیم اختر

سوچی سمجھی سازش کے تحت ملکی حالات خراب کئے جارہے ہیں،ڈاکٹر وسیم اختر

لاہور(سٹاف رپورٹر) امیر جماعت اسلامی صوبہ پنجاب و پارلیمانی لیڈر صوبائی اسمبلی ڈاکٹر سید وسیم اختراور سیکرٹری جنرل نذیر احمد جنجوعہ نے کہاہے کہ پاکستان اس وقت معاشی اور سیاسی بحرانوں کاشکار ہے۔سوچی سمجھی سازش کے تحت حالات خراب کیے جارہے ہیں تاکہ گوادر میں چین کی سرمایہ کاری کو روک کر اسے بین الاقوامی سطح کی بندرگاہ نہ بننے دیا جائے۔چند لوگوں کی وجہ سے پاکستان کی پوری دنیا میں بدنامی ہورہی ہے ہمیں آپس کے تمام اختلافات کوبھلاکر وسیع ترقومی مفاد میں ایک دوسرے کا ساتھ دینا ہوگا تاکہ ملک خوشحالی اور ترقی کی جانب گامزن ہوسکے۔انہوں نے کہاکہ کچھ لوگ ملک میں فوج اور عدلیہ کی حمایت حاصل کرکے عبوری حکومت کاقیام چاہتے ہیںجماعت اسلامی آئین وقانون سے متصادم کسی بھی اقدام کی حمایت نہیں کرے گی جمہوریت کی مضبوطی اور تسلسل کے لئے حکومتوں کواپنی آئینی مدت پوری کرنی چاہئے تاکہ عوام الیکشن میں کارکردگی کی بنیاد پر ووٹ ڈال سکیںماورائے قانون اقدامات سے نہ کبھی تبدیلی آئی ہے اور نہ کبھی آئے گی جماعت اسلامی کے رہنماﺅں نے کہاکہ کچھ قوتیں برسر اقتدار آکر اپنی نامکمل خواہشات کی تکمیل چاہتی ہیںدھرنوں نے آئین،پارلیمنٹ اور جمہوریت کے مستقبل پر سوالیہ نشان لگا دیے ہیں ۔ضرورت اس امر کی ہے کہ فریقین ملک وقوم کے مستقبل کی خاطر مذاکراتی عمل کودوبارہ شروع کریں اور رتمام معاملات کوافہام وتفہیم سے حل کیاجائے۔انہوں نے کہاکہ جماعت اسلامی نے اول روز سے موجودہ سیاسی بحران میں انتہائی مثبت کردار اداکیا ہے جسے ملک کے اندر اور باہر ہر جگہ سراہاجارہا ہے عوام دشمن پالیسیوں کی وجہ سے حکمران پندرہ ماہ میں ہی غیر مقبول ہوچکے ہیں۔پاکستان عملاً مسائلستان بن گیا ہے اداروں کی کارکردگی مایوس کن ہے۔سیاست میں اخلاقیات کاجنازہ نکل چکا ہے۔موجودہ نظام پر عوام کاکھویا ہوااعتماددوبارہ بحال کرنے کی ضرورت ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1