حکومت فرقہ وارانہ قتل و غارت گری کی روک تھام کے لیے اقدامات اٹھائے، ڈاکٹرخادم

حکومت فرقہ وارانہ قتل و غارت گری کی روک تھام کے لیے اقدامات اٹھائے، ...

لاہور(سٹاف رپورٹر)اہلسنت والجماعت کے مرکزی سیکرٹری جنرل ڈاکٹرخادم حسین ڈھلوں نے کہاکہ حکومت فرقہ وارانہ قتل و غارت گری کی روک تھام کے لیے اقدامات اٹھائے،سنی شیعہ کے نام پر مخصوص قوتیں جو بیرونی ایجنڈے پر کام کررہی ہیں ملوث ہیں،ملی یکجہتی کونسل کی متفقہ سفارشات کو قانونی شکل دی جانے چاہیے،اہلسنت والجماعت نے حکومت سندھ کی یقین دہانی پر اپنے احتجاجی دھرنا ختم کیا ہے،اگر اب مطالبات پورے نہ ہوئے تو یہ دھرنے ملک بھر میں پھیل جائیں گے،اہلسنت والجماعت نے ہمیشہ قیام امن کے لیے حکومت اور انتظامیہ سے بھرپورتعاون کیا ہے،

کراچی میں اہلسنت والجماعت کے ساتھ عرصہ دراز سے زیادتی ہوتی آرہی ہے،ایک ایک دن میں کئی کئی جنازے اٹھانے کے باوجود ہم نے ہمیشہ امن کا درس دیا ہے،لیکن اس وقت جب دہشت گرد بھی ٹارگٹ کررہے ہیں اور انتظامیہ کی جانب سے بھی اہلسنت کو ماورائے عدالت قتل کیا جارہاہے،ایسے حالات ناقابل برداشت ہیں،اہلسنت والجماعت کراچی نے دوسری مرتبہ حکومت کی یقین دہانی پر احتجاجی دھرنا ختم کیا ہے ،

مقررہ وقت تک تمام لاپتہ افراد بازیات کرائے جائیںاور ماورائے عدالت قتل میں ملوث افسران کے خلاف قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے ،بصورت دیگر اہلسنت والجماعت اپنے تحفظ کے لیے اپنا احتجاجی حق محفوظ رکھتی ہے ،اور اگر اب بھی دھوکہ دہی اور وقت گزاری سے حکومت نے کام لیا تو اہلسنت والجماعت ملک گیر دھرنوں کی کال دے گی۔اہلسنت والجماعت کے ترجمان کے مطابق اہلسنت والجماعت کے مرکزی سیکرٹری جنرل ڈاکٹرخادم حسین ڈھلوں آج خطبہ جمعہ خانقاہ فاروقیہ جامع مسجد حق چاریارماڈل ٹاو¿ن لاہور میں دیں گے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4


loading...