پیپلز پارٹی کے زونل صدور منظور احمد وٹو کےخلاف پھٹ پڑے

پیپلز پارٹی کے زونل صدور منظور احمد وٹو کےخلاف پھٹ پڑے

لاہور( شہزاد ملک ) پاکستان پیپلز پارٹی لاہور کی صدر ثمینہ خالد گھرکی صدارت میں منعقد ہونےو الے اجلاس میں پیپلز پارٹی کے ذونل صدور پیپلز پارٹی پنجاب کے صدر میاں منظور احمد وٹو کے خلاف پھٹ پڑے اور کہا کہ جب جلسے جلوسوں میں کارکنوں کو لانا ہوتا ہے تو تب ہماری ڈےوٹیاں لگا دی جاتی ہیں لیکن جب پارٹی کے چیرمین بلاول بھٹو زرداری بلاول ہاﺅس لاہور آئے تھے تو اس وقت لاہور کے ذونل صدور کی ان سے ملاقات تک نہیں کروائی گئی تھی۔ کیا ہمارا کام صرف جلسے جلوسوں اور ریلیوں میں بندے لانا ہے چیرمین بلاول بھٹو سے میں نے زونل صدور کو پنجاب تنظیم کی طرف سے ملاقات کے لئے نہ بلانے کی بات کی تھی جس پر چیرمین نے کہا تھا کہ وہ آئندہ کے لاہور کے دورہ پر ان صدور سے سپیشل ملاقات کریں گے اور عید کے موقع پر جب شریک چیرمین آصف علی زرداری لاہور آئیں گے تو آپ کی ان سے بھی لازمی ملاقات کروائی جائے گی ۔صدر ثمینہ خالد گھرکی کا ذونل صدور کو جواب۔ذرائع نے لاہور کے اجلاس کی اندرونی کہانی کے بارے میں بتایا ہے کہ زونل صدور کی اکثریت نے گزشتہ دنوں چیرمین بلاول بھٹو زرداری کی لاہور آمد کے موقع پر کارکنوں کی ملاقات کے موقع پر انہیں نظر انداز کرنے پر شدید غم و غصے کا اظہار کیا اور پنجاب کے صدر میاں منظور احمد وٹو کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ انہوں نے اس ملاقات کی فہرست میں لاہور کے ذونل صدور کو کیوں شامل نہیں کیا انہوں نے اپنی تنظیم کے تمام لوگوں کی ملاقات کروائی لیکن ہمیں مکمل طور پر نظر انداز کردیا گیا لیکن پارٹی کی طرف سے جب کوئی جلسے جلوس ےا ریلیاں کرنی ہوتی ہیں تو پھر ذونل صدور کی ذمے دارےاں لگا دی جاتی ہیں اب بھی ہمیں اپنے ساتھ پچاس پچاس کارکنوں کو کراچی لیکر جانے کے بارے میں کہا گیا ہے ہم اپنے زون کے کارکنوں کی فہرست عید کے بعد لاہور کے حوالے کردیں گے لیکن ہمیں بتاےا جائے کہ کیا ہمارا کام صرف ےہی ہے کہ ہم نے بندے لانے ہیں اور جب قیادت سے ملاقات کی باری آئے گی تو اس میں ہمیں بلایا ہی نہیں جائے گا ۔ذرائع کے مطابق ایک ذونل صدر نے ثمینہ خالد گھرکی سے کہا کہ ہمیں مسلم لیگ (ن) کی حکومت کا ساتھ نہیں دینا چاہئے اور کھل کر اپوزیشن کرنی چاہئے ۔

پی پی ذونل صدور

مزید : صفحہ اول


loading...