"گو نواز گو "کا نعرہ لگانے والوں پر تشدد کرنیوالوں کو جیل پہنچا کر دم لو ںگا :عمران خان

"گو نواز گو "کا نعرہ لگانے والوں پر تشدد کرنیوالوں کو جیل پہنچا کر دم لو ںگا ...

 میانوالی/اسلام آباد(اے این این)تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے کہا ہے کہ نواز شریف کے استعفے کی جلدی نہیں ،وہ تاخیر کریں میں قوم کو جگا لوں،دھرنا استعفے تک جاری رہے گا، ”گونواز گو“کانعرہ لگانے والوں پر تشدد ہوا تو گلو بٹوں کو جیل پہنچا کر دم لوں گا،یہ نعرہ قوم کی آواز بن چکا ہے، نعرے لگانا جمہوری اور آئینی حق ہے ،میرے خلاف جو مرضی گو کے نعرے لگائے تکلیف نہیں ہو گی،نواز شریف جلسے میں 75ہزار لوگ اکٹھے کر کے دکھا دیں،ہم مان جائیں گے دھاندلی نہیں ہوئی ،بھارتی حکومت کی طرح ہم بھی اپنے کسانوں کی مدد کریں گے۔میانوالی میں جلسہ عام سے خطاب کے دوران تحریک انصاف کے چیئرمین نے کہا کہ انہوں نے لاہور کے بعد میانوالی میں جلسہ عام کا فیصلہ اس لئے کیا کیونکہ میانوالی والوں نے انہیں سب سے پہلے اسمبلی میں پہنچایا، جو قوم ظلم کا مقابلہ نہیں کرتی وہ ختم ہوجاتی ہے، گو نواز گو کوئی غیر قانونی نعرہ نہیں ، اگر کوئی” گو عمران گو “کہے تو انہیں کوئی تکلیف نہیں ہوگی، اگر نواز گو کے نعرے پر نواز شریف اور شہباز شریف لوگوں پر تشدد اتر آئے ہیں۔نواز شریف نے انتخابات میں ڈیڑھ کروڑ ووٹ لئے ہیں اب اپنے جلسے میں اس کا 20 فیصد بھی لے آئیں تو وہ مان جائیں گے کہ الیکشن میں دھاندلی نہیں ہوئی۔ ہم یہ کبھی برداشت نہیں کریں گے کہ لوگ ووٹ کسی کو دیں اور کامیاب کوئی دوسرا قرار دے دیا جائے۔عمران خان نے کہا کہ وہ کسانوں سے وعدہ کرتے ہیں کہ جس طرح بھارتی حکومت اپنے کسانوں کی مدد کرتی ہے اسی طرح ہم بھی کسانوں کی مدد کریں گے۔ انہوں نے کہا میانوالی کے لوگوں کیلئے پیغام لیکر آیا ہوں کہ ہم اب ظلم کے سامنے نہیں جھکیں گے ظالم جابر کے سامنے کھڑا ہونا ہو گا کیونکہ جو قوم ظلم کا مقابلہ نہیں کرتی وہ مر جاتی ہے۔ جو معاشرہ ظلم کیخلاف آواز نہیں اٹھاتا وہاں جنگل کا قانون آ جاتا ہے۔انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف 21اکتوبر کو لاڑکانہ میں جلسہ کرے گی۔

عمران خان

مزید : صفحہ اول


loading...