آئندہ انتخابات،پنجاب میں پی ٹی آئی اور عوامی تحریک اتحادی ہونگی

آئندہ انتخابات،پنجاب میں پی ٹی آئی اور عوامی تحریک اتحادی ہونگی

لاہور(جاوید اقبال+حنیف خان)آئندہ انتخابات میں حصہ لینے کے لئے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی)اور پاکستان عوامی تحریک نے سیاسی منظر نامہ تشکیل دینا شروع کردیا ہے جس کے تحت پنجاب میں پی ٹی آئی اور عوامی تحریک ایک دوسرے کی اتحادی ہونگی اور اس کے لئے بڑا سیاسی الائنس بنایا جائے گا جس میں ق لیگ ،ایم کیو ایم ،عوامی مسلم لیگ ،مجلس وحدت المسلیمین ،سنی اتحاد کونسل سمیت دیگر علاقائی جماعتوں کو شامل کیا جائے گا۔ پی ٹی آئی سندھ میں ممتاز بھٹو سمیت مسلم لیگ فنکشنل کو بھی اتحاد ی بنائے گی اور انتخابات کا میدان سجنے کے دوران پی ٹی آئی اور عوامی تحریک پنجاب کو ٹارگٹ بنائیں گی اور آغاز میں ایک دوسرکے کے آمنے سامنے ہونگی جس کا مقصدپنجاب میں مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی کو ٹف ٹائم دینا ہوگا ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ مستقبل کا سیاسی منظر نامہ طے کرنے کے لئے پی ٹی آئی اور عوامی تحریک میں کئی معاملات پر بات ہور ہی ہے جس میں ابتدائی طور پر طے پایا ہے کہ وہ پنجاب میں آئندہ انتخابات میں ایک دوسرے کے مد مقابل ہوگی اور انتخابات پر دل کھول کر انتخابی تشہیر کی جائے گی اورعوام میں تاثر دیا جائے گا کہ پنجاب میں صرف دو پارٹیوں میں ہی انتخابات ہونگے ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ انتخابات کے آخری مرحلے میں پی ٹی آئی اور عوامی تحر یک دیگر ہم خیال جماعتوں سے مل کر الائنس بنائیں گی اور ن لیگ کے مد مقابل آجائیں گی ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ سندھ میں اسی الائنس میں ایم کیو ایم ،مسلم لیگ فنکشنل اور ممتاز بھٹو کو ساتھ ملائیں گی اور سندھ سے پیپلزپارٹی کا ”پتا“صاف کرنے کے لئے آخری حد تک جائیں گی جس پر دونوں جماعتوں نے کام شروع کردیا ہے اس کے لئے دونوں جماعتیں مسلم لیگ ن اور پیپلزپارٹی کے ناراض رہنماﺅں اور ایسے لوگ جنہیں گزشتہ انتخابات میں ٹکٹ نہیں دیا گیا تھا ان کے ساتھ ملانے کے لئے ان سے رابطے کرنے کے لئے دونوں جماعتوں نے کمیٹی تشکیل دے دی ہے ۔ذرائع کا کہنا ہے کہ پی ٹی آئی اور عوامی تحریک انتخابات سے قبل قومی حکومت بنانے کے لئے مہم تیز کریں گی اور قومی حکومت سے احتساب کے ساتھ ساتھ انتخابی قوانین میں ترامیم کا کام بھی کروائیں گی ۔

آئندہ انتخابات

مزید : صفحہ اول


loading...