گائےذبح کرنے والے کو پھانسی، بھارتی جنتاپارٹی کے رہنما کا اعلان

گائےذبح کرنے والے کو پھانسی، بھارتی جنتاپارٹی کے رہنما کا اعلان
گائےذبح کرنے والے کو پھانسی، بھارتی جنتاپارٹی کے رہنما کا اعلان

  

نیو دہلی ( مانیٹرنگ ڈیسک ) بھارتی حکمران جماعت بی جے پی کے صوبہ ہریانہ کے سربراہ نے اپنے عوام سے وعدہ کر لیا ہے کہ گائے کو ذبح کرنے والوں کو سزائے موت  دی جائے گی اور اس سلسلہ میں قانون سازی کی جائے گی۔

رام بلاس نامی بی جے پی رہنماءریاستی الیکشن کے سلسلہ میں ایک تقریب سے خطاب کررہے تھے۔ان کا کہنا تھا کہ گائے ذبح کرنے پر موجودہ سزا پانچ سال قید ہے جو انتہائی ناکافی ہے۔انہوں نے کہا کہ وہ گائے کو ذبح کرنے کو انسان کے قتل کے برابر سمجھتے ہیں اور اس کے مرتکب ہونے والوں کو بھی وہی سزا دی جائے گی جو قاتلوں کو دی جاتی ہے۔

اس موقع پر بی جے پی کے قومی سطح کے نمائندے مختار عباس نقوی بھی موجود تھے۔ایک اور بی جے پی رہنماءویر کمار یادو کا کہنا تھا کہ ان کی پارٹی کے اقتدار میں آنے کے بعد ان کے پاس یہ طاقت موجود ہے کہ وہ قانون کو تبدیل کر کے گائے ذبح کرنے والوں کو موت کی سزا دیں۔

واضح رہے کہ صوبہ ہریانہ میں تقریبا 50 لاکھ مسلمان آباد ہیں جن کے لیے حکمران جماعت کے رہنماوں کے بیانات شدید خوف و دہشت کا سبب بن رہا ہے۔

مزید : انسانی حقوق