دنیا خطے میں امن چاہتی ہے تو مسئلہ کشمیر حل کرائے ،جنرل راحیل

دنیا خطے میں امن چاہتی ہے تو مسئلہ کشمیر حل کرائے ،جنرل راحیل

لندن ،راولپنڈی(بیورورپورٹ ، ایجنسیاں) چیف آف دی آرمی سٹاف جنرل راحیل شریف نے کہا ہے کہ ہمارے تنازعات کی جڑ مسئلہ کشمیر ہے، دنیا اس خطے میں مستقل امن کی خواہاں ہے کہ اسے مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے مدد کرنا ہوگی، رائل یونائیٹڈ سروسز انسٹی ٹیوٹ لندن میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کشمیر تقسیم برصغیر کا نامکمل ایجنڈا ہے، خطے میں مستقل امن کے لئے اقوام عالم کو مسئلہ کشمیر حل کرنے میں مدد کرنی چاہئے۔ جنرل راحیل شریف نے کہا کہ بھارت کی پاکستان کے خلاف بالواسطہ حکمت عملی، خاص طور پر اسی کی طرف سے کنٹرول لائن کی خلاف ورزیوں سے خطے میں برے اثرات مرتب ہو رہے ہیں۔ افغانستان کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ افغانستان کے ساتھ ہمارے برادرانہ تعلقات اور خونی رشتہ ہے، مفاہمت کے جذبے ہی سے آگے بڑھا جاسکتا ہے، پاکستان مخالف پراپیگنڈہ ختم ہونا چاہئے، افغانستان میں مستقل قیام امن کی کوششوں کے دوران میں امن خراب کرنے والوں پر نظر رکھنا ہوگی جبکہ قیام امن کے لئے بہتر بارڈر مینجمنٹ اور بین الاقوامی تعاون کی ضرورت ہے، آرمی چیف نے کہا کہ پاکستان کی سیکیورٹی صورتحال، معاشی ترقی بہتر ہو رہی ہے اور ملک میں مکمل سیکیورٹی کے لئے کوششیں جاری رکھیں گے۔دریں اثناچیف آف آرمی سٹاف جنرل راحیل شریف نے کہاہے کہ برطانیہ بین الاقوامی سطح پر دہشتگردی کی فنڈنگ اور مواصلاتی روابط کی روک تھام کیلئے اپنا کر دار ادا کر ے ۔جمعہ کو آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے مستقل برطانوی وزیر داخلہ سے یہاں ملاقات کی ملاقات کے دور ان جنرل راحیل شریف نے برطانوی وزیر سے کہاکہ برطانوی حکومت دہشتگردوں کی عالمی سطح پر فنانسنگ اور ان کے مواصلاتی روابط کی روک تھام کیلئے اپنا موثر کر دارادا کرے ۔ذرائع کے مطابق ملاقات میں باہمی دلچسپی اور دہشتگردی کے خلاف جنگ سمیت مختلف امورپر تبادلہ خیال کیا گیا ۔

مزید : صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...