بزرگ پنشنرز سے ناروا سلوک ،نیشنل بنک حافظ آباد کاعملہ تبدیل

بزرگ پنشنرز سے ناروا سلوک ،نیشنل بنک حافظ آباد کاعملہ تبدیل

لاہور(سپیشل رپورٹر)محتسب پنجاب جاوید محمود کے نوٹس لینے کے بعد بزرگ پنشنرز سے ناروا سلوک کرنے اور انہیں پنشن کے حصول کیلئے بلاوجہ دیر تک کھڑا رکھنے اور طویل انتظار کروانے والے نیشنل بنک حافظ آباد کے متعلقہ سٹاف کو تبدیل کر دیا گیا ہے اور پنشنرز کیلئے نیشنل بنک حافظ آباد میں پینے کیلئے پانی، بیٹھنے کیلئے کرسیاں اور پنکھوں کا انتظام کیا گیا ہے۔ بنک منیجر نے تحریری طور پر محتسب پنجاب کو یقین دہانی کرائی کہ وہ پنشنرز کے معاملات خود دیکھیں گے اور آئندہ کسی قسم کی شکایت کا موقع نہیں دیں گے جس کے بعد محتسب پنجاب نے پنشنرز کی جانب سے دی جانے والی درخواست نمٹا دی۔ حافظ آباد سے تعلق رکھنے والے بزرگ پنشنرز نے محتسب پنجاب کو درخواست دی تھی کہ نیشنل بنک حافظ آباد میں پنشن دینے پر مامور سٹاف کئی گھنٹے تک انہیں بلا وجہ دھوپ میں کھڑا رکھتا ہے اور پنشنرز کے ساتھ سٹاف کا رویہ بھی انتہائی توہین آمیز ہے۔ محتسب پنجاب نے ڈسٹرکٹ ایڈوائزر حافظ آباد کو معاملے کی انکوائری کی ہدایت کی جس کے بعد منیجر نیشنل بنک حافظ آباد اعجاز علی شاہ نے خود حاضر ہو کر بتایا کہ پنشن پر مامور متعلقہ سٹاف تبدیل کر دیا گیا ہے ۔ پنشنرز کیلئے پینے کے پانی، بیٹھنے کیلئے کرسیاں اور پنکھوں کا بھی انتظام کیا گیا ہے ۔بنک منیجرنے بتایا کہ انہوں نے فیصلہ کیا ہے کہ وہ پنشنرز کے معاملات خود دیکھیں گے۔ محتسب پنجاب نے کہا کہ پنشنرز نہ صرف بزرگ شہری ہیں بلکہ انہوں نے اپنی جوانی اور قیمتی وقت قوم اور ملک کی خدمت کیلئے صرف کیا ہے اس لئے ان کی خدمت اور سہولیات کا خیال رکھنا تمام محکموں اور سٹاف کی قومی اور دینی ذمہ داری ہے۔ انہوں نے تمام بنک حکام کو یاد دلایا کہ سٹیٹ بنک آف پاکستان نے پنشنرز کو سہولیات فراہم کرنے کیلئے خصوصی ہدایات جاری کر رکھی ہیں جن پر عملدرآمد نہ ہونے کی صورت میں محتسب پنجاب آفس خود متعلقہ بنک سٹاف کے خلاف کارروائی کیلئے مجاز حکام سے رجوع کرے گا۔

مزید : صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...