پاکستان کا اقوام متحدہ کو ثبوت پیش کرنا اپنی ناکامی کا اعتراف ہے، مذاکرات میں تیسرے فریق کشمیریوں کی کوئی گنجائش نہیں: بی جے پی

پاکستان کا اقوام متحدہ کو ثبوت پیش کرنا اپنی ناکامی کا اعتراف ہے، مذاکرات ...
پاکستان کا اقوام متحدہ کو ثبوت پیش کرنا اپنی ناکامی کا اعتراف ہے، مذاکرات میں تیسرے فریق کشمیریوں کی کوئی گنجائش نہیں: بی جے پی

  

نئی دہلی (اے این این) اقوام متحدہ میں پاکستان کے بھارت کیخلاف دہشت گردی کے شواہد پیش کرنے پر بھارتی حکمران جماعت نے خفت مٹانے کیلئے اسے پاکستان کی ناکامی قرار دیا ہے۔ بھارتی حکمران جماعت بی جے پی کے ترجمان سمبیت پترا نے کھسیانی بلی کھمبا نوچے کے مصداق پاکستان کے بھارتی دہشت گردی کے ثبوت اقوام متحدہ میں پیش کرنے پر ہفتہ کے روز یہاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ پاکستان کے اقوام متحدہ میں دہشت گردی کے شواہد پیش کرنا پاکستان کی عالمی سطح پرناکامی کو ظاہر کرتا ہے۔ اس اقدام سے پاکستان کے عالمی برادری میں بے نقاب ہونے کے بعد مشکل میں پڑ گیا ہے۔

وزیر خارجہ سشما سوراج نے پاکستان کو بھرپور جواب دیاہے کہ مذاکرات سے پہلے دہشت گردی کو ختم کرنا ہو گا۔ انہوں نے کہاکہ شملہ معاہدہ اور لاہور اعلامیے کے مطابق پاکستان کےساتھ صرف دوطرفہ مذاکرات ہوسکتے ہیں کسی تیسرے فریق کشمیریوںکی کوئی گنجائش نہیں،اس کے باوجود پاکستان اس کی خلاف ورزی کررہاہے جس سے اس کی ناکامی ظاہر ہوتی ہے۔ واضح رہے کہ پاکستان نے بھارت کے پاکستان میں دہشتگردی کے واقعات میں ملوث ہونے کے ثبوت گزشتہ روز اقوام متحدہ کے سیکرٹری بان کی مون کو پیش کردیئے ۔

مزید : بین الاقوامی