نئے ہسپتالوں کی تعمیر کیلئے رعایتی شرح پر قرض کی رقم 1ارب کردی گئی

  نئے ہسپتالوں کی تعمیر کیلئے رعایتی شرح پر قرض کی رقم 1ارب کردی گئی

  

 اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)سٹیٹ بینک آف پاکستان نے ملک میں ہسپتالوں کی تعمیر کیلئے رعایتی شرح پر قرضوں کی فراہمی کو دگنا کرنے کا فیصلہ کرتے ہوئے قرض کی حد 50 کروڑ سے بڑھا کر ایک ارب روپے کردی۔ایکسپریس کے مطابق سٹیٹ بینک نے ہسپتال کی تعمیر کیلئے آسان شرائط پر قرضہ کی حد کو 50 کروڑ روپے سے بڑھا کر ایک ارب روپے تک کردیا ہے۔ ایس بی پی کے مطابق نئے ہسپتالوں کی تعمیرکیلئے قرضوں کی فراہمی کی سکیم 30 جون 2021ء تک جاری رہے گی۔سٹیٹ بینک آف پاکستان نے کوویڈ 19 کی وبا کے باعث ملک میں صحت کی سہولیات کی بہتری اور اضافہ کیلئے آسان شرائط پر قرضے فراہم کرنے کا فیصلہ کیا تھا اور صوبائی یا وفاقی محکمہ صحت کیساتھ رجسٹرڈ ہسپتال 3 فیصد شرح سود پر قرضہ حاصل کرسکتا ہے۔ابتدا میں سکیم کیلئے پانچ ارب روپے مختص کیے گئے تھے اور ایک ہسپتال 20 کروڑ روپے تک قرضہ حاصل کرسکتا تھا بعد ازاں قرضہ کی حد 50 کروڑ روپے تک بڑھائی گئی اور اب اس حد کو ایک ارب روپے تک کردیا گیا ہے۔

ہسپتال قرضہ

مزید :

صفحہ اول -