مسافر گاڑیوں میں لگے گیس سلنڈر ز کے خلاف آپریشن کا فیصلہ 

مسافر گاڑیوں میں لگے گیس سلنڈر ز کے خلاف آپریشن کا فیصلہ 

  

 کراچی (اسٹاف رپورٹر)سندھ حکومت نے مسافر گاڑیوں میں لگے غیر معیاری گیس سلنڈرز کے خلاف آپریشن کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔صوبائی وزیر ٹرانسپورٹ سید اویس قادر شاہ نے ایمپریس مارکیٹ،راشد منہاس روڈ اور آواری کے اطراف غیر معیاری گیس سلینڈرز کے خلاف ٹریفک پولیس کے ساتھ مل کر کارروائی کرتے ہوئے دو سو سے زائد مسافر گاڑیوں سے غیر معیاری گیس سلینڈرز نکالے۔اس موقع پر ٹریفک پولیس نے کئی گاڑیاں تحویل میں لے لیں۔سید اویس قادر شاہ نے میڈیا سے  بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ والدین ان اسکول وینز میں بچوں کو نہ بھیجیں جس میں گیس سلینڈر لگا ہوا ہو۔پبلک ٹرانسپورٹ میں گیس سلینڈر کا استعمال خطرناک ہے۔سلینڈر ہٹانے کی مہم چلانے سے پہلے سندھ حکومت کی جانب سے اخبار میں اشتہار دیا گیا تھا۔انہوں نے کہا کہ سلینڈر کی وجہ سے کچھ دن پہلے ایک حادثہ بھی ہوچکا ہے جس پر بہت افسوس ہوا۔سندھ واحد صوبہ ہے جہاں سی این جی قوانین موجود ہیں۔اویس شاہ نے کہا کہ اسکول وین اور بسز سے ایل پی جی سلینڈر نکال کر ان پر مقدمہ درج کروایا جائے گا۔موٹروے پولیس محکمہ ٹرانسپورٹ اور ٹریفک پولیس پر الزام تراشی کرنے کی بجائے اپنا کام کرے۔موٹروے پولیس اگر اپنا کام کرتی تو موٹروے پر حادثات نہ ہوتے۔انہوں نے کہا کہ کراچی کے لئے جلد بہتر بسز شروع کریں گے۔کئی منصوبے تکمیل کے مراحل میں ہیں۔فی الحال گیس سلینڈر مہم چلا رہے ہیں۔ اویس شاہ نے ٹریفک پولیس کو ہدایت کی کہ پبلک ٹرانسپورٹ کی تمام گاڑیوں سے گیس سلینڈر نکال کر ان کو چھوڑدیا جائے۔اسکول وینز اور بسز سے ایل پی جی گیس سلینڈر نکال کر ان کو بند کیا جائے۔ 

مزید :

صفحہ آخر -