گورنر پنجاب چوہدری سرور سے نومنتخب  چیئرمین پی سی جی اے کی وفد کے ہمراہ ملاقات

     گورنر پنجاب چوہدری سرور سے نومنتخب  چیئرمین پی سی جی اے کی وفد کے ہمراہ ...

  

 ملتان (نیوز رپورٹر)  پاکستان کاٹن جنرز ایسوسی ایشن کے نومنتخب چیئرمین نے عہدے کا چارج سنبھالتے ہی سینئر وائس چندر لال اور وائس چیئرمین ملک طفیل احمد کے ہمراہ گورنر پنجاب چوہدری محمد سرور سے لاہور(بقیہ نمبر39صفحہ 6پر)

 میں ملاقا ت کی جس میں کاٹن کراپ میں کمی،کوالٹی کا فقدان،تصدیق شدہ اچھے بیج کی عدم دستیابی اور موسمی تبدیلیوں اور شدید بارشوں کے باعث کپاس کی کوالٹی او رکوانٹٹی پر اثرات کے متعلق بات چیت کی گئی۔وائٹ گولڈ کاٹن کی فصل میں ہر سال کمی کی وجہ سے مسائل میں اضافہ ہو رہا ہے جس کی بہتری کے لیے پی سی جی اے نے اپنی سفارشات پیش کیں اور اس پر عملی اقدامات کی اپیل کی ہے۔گورنر پنجاب نے یقین دہانی کروائی ہے کہ وہ کپاس کی فصل میں اضافہ اورکوالٹی میں بہتری کے لیے  پی سی جی اے کی سفارشات کو اعلیٰ حکومتی عہدیداران تک پہنچائیں گے اور کپاس کی بحالی کے لیے اپنی تمام تر کوششیں بروئے کار لائیں گے۔بعد ازاں ڈی جی ایگیریکلچر زراعت ڈاکٹر انجم بٹر سے لاہور میں ملاقات میں کپاس میں خطرناک حد تک کمی کے متعلق ا?گاہی اور کاٹن کنٹرول ا?رڈیننس کے نفاذ کے متعلق بات چیت کی گئی۔وفد نے بتایا کہ موسم سے مطابقت نہ رکھنے والی سیڈ ورائیٹیز کا فقدان کرا پ سائز میں کمی کا موجب ہے اور سانگلی کی بہتات اور غیر معیاری چنائی کے باعث کپاس کی کوالٹی بری طرح متاثر ہو رہی ہے جو کہ پاکستانی معیشت کے لیے نقصان کا باعث ہے۔ محکمہ زراعت اپنے فیلڈ ورکر کے ذریعے کپاس کی فصل کو بہتر بنانے میں اپنا کردار ادا کرے اور کپاس کی فصل پر حملہ کرنے والے کیڑے مکوڑوں اور بیماریوں پر بر وقت قابو پائے تاکہ مطلوبہ ہدف کا حصول ممکن ہو سکے۔ایڈیشنل سیکرٹری پلاننگ راؤ عاطف احمد سے بھی کپاس کے ا?نے والے سیزن اور موجودہ مشکلات اور مسائل کے حل کے متعلق بات چیت ہوئی۔پی سی جی اے نے محکمہ زراعت کو مکمل یقین دہانی کروائی ہے کہ پی سی جی اے کپاس کی فصل میں اضافہ کے لیے ہر وقت شانہ بشانہ چلنے کے لیے تیار ہے اور مطلوبہ ہدف کے حصول کے لیے بھر پور تعاون کرے گا۔

ملاقات

مزید :

ملتان صفحہ آخر -