خیبر پختونخوا اسمبلی کا اجلاس، ایم پی ایز ہاسٹل میں سہولتوں کے فقدان کا نوٹس 

خیبر پختونخوا اسمبلی کا اجلاس، ایم پی ایز ہاسٹل میں سہولتوں کے فقدان کا ...

  

پشاور(نیوزرپورٹر)ہاوسنگ اینڈ لائبریری کی قائمہ کمیٹی کا اجلاس زیر صدارت ڈپٹی سپیکر خیبرپختونخوا اسمبلی محمود جان گزشتہ روزاسمبلی کانفرنس روم میں منقعد ہوا۔ اجلاس میں اراکین اسمبلی  بابر سلیم،  خالد خان،  بصیرت خان، حافظ عصام الدین  کے علاوہ ایس ای PBMC فضل وہاب ، ڈپٹی سیکرٹری لا شبیر احمد، XEN PBMC ِمحمد ارشد، XEN C&Wسہیل ادریس،ایڈیشنل سیکرٹری محمد ماہر، ڈائریکٹر فنانس ارسلا خان اور دیگرمتعلقہ حکام و اہلکاروں نے شرکت کی۔ اجلاس میں ایم پی ایز ہاسٹل میں ضروری سہولتوں کے فقدان کا نوٹس لیا گیا اور محکمہ سی ایند ڈبلیو کی کارکردگی پر سخت تنقید کرتے ہوئے عدم اطمنان کا اظہار کیا گیا۔ اجلاس میں اراکین اسمبلی نے واضح کیا کہ متعلقہ سی ایند ڈبلیو حکام مذکورہ ہاسٹل میں اراکین کو ضروری سہولیات کی فراہمی میں ناکام رہے ہیں اور گزشتہ عرصے میں کاغذاتی کاروائی عمل میں لاتے ہوئے عملی طور پر کام کی ادائیگی میں ناکام رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آب نوشی کے نلکوں میں  زنگ  آلود پانی آ رہا ہے اور متعلقہ محکمہ کے حکام زبانی جمع خرچ کرکے دامن صاف کرلیتے ہیں۔ اجلاس میں ڈپٹی سپیکرو اراکین اسمبلی نے اپنی ناراضگی کا اظہار کرتے ہوئے واضح کیا کہ موجودہ حکومت میں ایسا نہیں چلے گا لہذا محکمہ ہاسٹل کے امور سے متعلق گزشتہ پانچ سالوں کا ریکارڈ آئندہ میٹنگ میں پیش کرئے اور ہدایت کی کہ مذکورہ محکمہ فوری طو ر پر ہاسٹل سے متعلق جامع  PC-1  بنائے اور ہاسٹل میں یکساں ضروری سہولیات فراہم کرنے کے لیے فوری اقدامات اٹھائے۔ تا کہ اراکین اسمبلی کو روزانہ درپیش مشکلات سے چٹکارہ دلایا جائے اور زندگی کی تمام ضروریات بہم فراہم کی جائیں۔ اجلاس میں اسمبلی بلڈنگ کی وائٹ واش  کا بھی نوٹس لیا گیا اور آئندہ اجلاس میں مذکورہ معاملے کا مکمل ریکارڈ فراہم کرنے کی ہدایت کی گئی۔ اجلاس میں ڈپٹی سپیکر نے کہا کہ ہاسٹل میں بار بار گیزرز کی تبدیلی کی جاتی رہی اور خرچہ کیا گیا لیکن پھر بھی مسائل کا حل ممکن نہ ہو سکا۔ لہذا محکمہ اس بارے مکمل تفصیلات فراہم کرے۔ بعد ازاں اجلاس میں اسمبلی لائبریری کے امور کا جائزہ لیا گیا اور لائبریری حکام کی جانب سے ملٹی میڈیا کے ذریعے  بریفینگ دی گئی اجلاس میں اسمبلی لائبریری کو جدید تقاضوں کے ہم آہنگ کرنے کے بارے میں مختلف تجاویز پر غور و خوض کیا گیا اور اس ضمن میں ضروری اقدامات اٹھانے کی ضرورت پر زوردیا گیا۔

مزید :

صفحہ اول -