بلوچستان میں سیاسی بحران  پھر شدید،صادقسنجرانی دوبارہ  متحرک، آج کوئٹہ پہنچیں گے

   بلوچستان میں سیاسی بحران  پھر شدید،صادقسنجرانی دوبارہ  متحرک، آج کوئٹہ ...

  

  کوئٹہ (مانیٹرنگ ڈیسک) بلوچستان میں سیاسی بحران شدت اختیار کر گیا، چیئر مین سینیٹ صادق سنجرانی ایک مرتبہ پھر متحرک ہو گئے۔ذرائع کے مطابق چیئر مین سینیٹ صادق سنجرانی تین روزے دورے پر آج کوئٹہ پہنچیں گے، صادق سنجرانی وزیراعلی بلوچستان جام کمال سے ملاقات کرینگے، چیئر مین حکمران جماعت کے ناراض اسپیکر، صوبائی وزار اور ایم پی ایز سے ملاقات کرینگے۔ذرائع کے مطابق صادق سنجرانی ناراض اراکین کے تحفظات دور کرنے کی کوشش کرینگے۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر استعفے کے حوالے سے خبروں کی تردید کر دی۔اس سے قبل ترجمان بلوچستان حکومت لیاقت شاہوانی کا بھی کہنا تھا کہ وزیر اعلی بلوچستان جام کمال خان کے استعفی کے متعلق خبر میں صداقت نہیں۔  سپیکر بلوچستان اسمبلی عبدالقدوس بزنجو صوبے کا وزیراعلی بننے کیلئے متحرک ہوگئے۔ ایکسپریس نیوز کے مطابق  سپیکر بلوچستان اسمبلی اور بلوچستان عوامی پارٹی (باپ) کے رہنما عبدالقدوس بزنجو اب وزیراعلیٰ بلوچستان بننے کے خواہشمند ہیں اور اس حوالے سے ذرائع نے  بتایا کہ عبدالقدوس بزنجو کے قریبی ساتھی اور صوبائی وزیر نے جے یو آئی بلوچستان کے امیر مولانا عبدالواسع کی کراچی میں واقع رہائش گاہ میں اہم ملاقات کی ہے اور جے یو آئی سے وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال کو ہٹانے کے لئے مدد بھی طلب کی ہے۔ذرائع نے  بتایا کہ صوبائی وزیر نے مولانا عبدالواسع سے بات کرتے ہوئے کہا کہ جام کمال کو وزارت اعلی سے ہٹاکر عبدالقدوس بزنجو کو وزیر اعلی بنوانے میں تعاون چاہیئے۔ تاہم مولانا عبدالواسع نے جواب دیا کہ ہماری جماعت کسی کے مفاد میں استعمال نہیں ہوگی، اگر عبدالقدوس بزنجو اور ناراض لوگ جام کمال کو ہٹانے کیلئے سنجیدہ ہیں تو پہلے وزارتوں سے استعفی دیں، استعفے دے کر ناراض لوگ خود جام کمال کے خلاف عدم اعتماد کی تحریک لائے، ناراض گروپ عدم اعتماد کی تحریک لیکر ائے اپوزیشن ساتھ دیں گی۔

 عبدالقدوس بزنجو

 سنجرانی

مزید :

صفحہ اول -