قطر میں پہلی بار قانون ساز مجلس شوریٰ کے لیے انتخابی عمل جاری

قطر میں پہلی بار قانون ساز مجلس شوریٰ کے لیے انتخابی عمل جاری

  

  دوحہ(مانیٹرنگ ڈیسک)قطر میں پہلی بار قانون ساز مجلس شوریٰ کے 30 ارکان کے انتخاب کے لیے ملک گیر الیکشن کا انعقاد کیا جا رہا ہے۔عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق قطر میں پہلی بار ملک کی قانون ساز مجلس شوریٰ کی 30 نشستوں کے لیے انتخابی عمل جاری ہے جس میں 28 خواتین سمیت 284 امیدواروں کے درمیان مقابلہ ہے۔ملک میں کوئی سیاسی جماعت نہ ہونے کے سبب تمام امیدوار آزاد حیثیت میں حصہ لے رہے ہیں۔ امیدواروں کے لیے 30 سال سے زائد عمر اور قطری شہری ہونا لازمی ہے اسی طرح انتخابات میں صرف قطر کی شہریت رکھنے والے 18 سال سے زائد عمر کے افراد ہی ووٹ ڈال سکیں گے۔قطر میں قانون ساز اسمبلی کے ارکان کی تعداد 45 ہے تاہم 15 ارکان کا انتخاب براہ راست امیرِ قطر تمیم بن حمد خلیقہ الثانی خود کریں گے جبکہ بقیہ 30 ارکان کا انتخاب جنرل الیکشن کے ذریعے ہو رہا ہے۔قطر میں پہلی بار الیکشن کے انعقاد کو عالمی سطح پر سراہا جا رہا ہے تاہم الیکشن میں خواتین امیدواروں کی تعداد نہایت کم ہونے کا شکوہ بھی کیا جا رہا ہے۔اس بات کا بھی امکان ہے کہ امیرِ قطر اپنا استحقاق استعمال کرتے ہوئے 15 ارکان میں خواتین کا بھی انتخاب کریں گے اس طرح قانون ساز مجلس شوریٰ میں خواتین ارکان کی تعداد میں مزید اضافہ ہوجائے گا۔

 انتخابی عمل 

مزید :

صفحہ آخر -