سندھ ہائیکورٹ، پرائیویٹ سکولز کی فیسوں میں سالانہ 5 فیصد سے زائد اضافہ غیر قانونی قرار

03 ستمبر 2018 (08:59)

کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) سندھ ہائیکورٹ نے پرائیویٹ سکولز کی جانب سے سکولوں کی فیسوں میں سالانہ 5 فیصد سے زائد اضافے کو غیر قانونی قرار دے دیا۔

سندھ ہائیکورٹ کے جسٹس عقیل احمدعباسی،جسٹس محمدعلی مظہر اور جسٹس اشرف جہاں پر مشتمل 3 رکنی لارجر بینچ نے 6 جون کو اسکول فیس میں اضافے سے متعلق کیس کا فیصلہ محفوظ کیا تھا جو آج سنا دیا گیا ہے۔ عدالت نے اپنے فیصلے میں نجی سکولوں کی جانب سے فیس میں سالانہ 5 فیصد سے زائد اضافے کو غیر قانونی قرار دے دیا۔ فیصلے میں کہا گیا ہے کہ پرائیویٹ سکولز 5 فیصدسے زائد فیس بڑھانے کے اہل نہیں ہیں۔ عدالت نے پرائیویٹ سکولز کو 5 فیصدسے زائد فیس وصولی سے روک دیا۔

مزیدخبریں